۳۳پنجاب ہیلتھ کیئر کمیشن کا13اضلاع میں عطائیوں کیخلاف کارروائی،گزشتہ ہفتے میں307 اڈے سر بمہر کیے

پیر مئی 23:16

لاہور۔28 مئی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 28 مئی2018ء) سپریم کورٹ کے احکاما ت کی تعمیل میں پنجاب بھر میں جاری کارروائی کے دوران پنجاب ہیلتھ کیئر کمیشن نے گزشتہ ہفتے میں307عطائیوں کے ا ڈے سیل کر دیے۔ تفصیلات کے مطابق کمیشن کی ٹیموں نی13 اضلاع میں انتظامیہ اور پولیس کے ساتھ مل کر کارروائی کی، جن میںقصور،شیخوپورہ،ٹوبہ ٹیک سنگھ ،پاکپتن ،بہاولنگر،وہاڑی،لیہ ،ڈیرہ غازی خان،گجرانوالہ، راولپنڈی،سیالکوٹ، سرگودھااورلاہورشامل ہیں۔

کمیشن کی ٹیموں نے ان ضلعوں کے مختلف علاقوں میں891علاج گاہوںپرچھاپے مارے اوران میں سے 307پر عطائی کام کرتے ہوئے پائے گئے،جن کے اڈوں کو سربمہر کردیاگیا۔سب سے زیادہ38اڈے قصورمیں بند کیے گئے ، شیخوپورہ میں37،راولپنڈی اور گجرانوالہ ہر ایک میں 26،سرگودھا 25،بہاولنگر24،،لاہور اورپاکپتن ہر ایک میں 22،ڈی جی خان 21،لیہ اور وہاڑی ہرایک میں20عطائیوں کے کاروبار بند کردیے گئے ہیں۔

(جاری ہے)

مزیدبرآںاعدادوشمار کے مطابق 891میں سی274 عطائیوں نے عطائیت چھوڑ کردوسرے کاروبارشروع کردیے ہیں۔واضح رہے کہ سپریم کورٹ کے فیصلے سے اب تک پنجاب ہیلتھ کیئر کمیشن نے 3,032عطائیوں کے اڈے بند کیے ہیں ۔ ریکارڈ کے مطابق کمیشن کی ٹیموںنے 8,745علاجگاہوں کا دورہ کیا،جن میں سے مزید 2,200نے عطائیت ترک کر کے دوسرے کاروبار شروع کر دیے ہیں۔