سعودی شوریٰ نے انسداد چھیڑ خانی قانون کے مسودے کی منظوری دے دی

منگل مئی 11:10

ریاض۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 29 مئی2018ء) سعودی مجلس شوریٰ نے انسداد چھیڑخانی قانون کے مسودے کی منظوری دے دی۔ سعودی اخبار کے مطابق شوریٰ نے انسداد چھیڑخانی قانون کی حتمی منظوری کے لئے معاملہ خادم حرمین شریفین کو بھجوا دیا ہے۔

(جاری ہے)

یہ قانون 8 دفعات پر مشتمل ہے جس کا مقصد چھیڑ خانی کا سدباب ہے جو شخص بھی چھیڑ خانی کے جرم کا مرتکب ہوگا اسے سزا دی جائے گی اور متاثرین کو تحفظ فراہم کیا جائے گا۔

یہ قانون اسلامی شریعت اور ریاستی قوانین کے عین مطابق ہے جن میں فرد کی نجی حیثیت ، اس کے وقار اور آزادی کے تحفظ پر زور دیاگیا ہے۔ واضح رہے کہ خادم حرمین شریفین نے مذکورہ قانون کا مسودہ تیار کرنے کی ہدایت وزارت داخلہ کو جاری کی تھی۔ سعودی قیادت فرد ، خاندان اور معاشرے کو چھیڑ خانی کے منفی اثرات اور خطرات سے بچانے کے سلسلے میں پرعزم ہے۔

متعلقہ عنوان :