چین عالمی سیروسیاحت کے شعبے کی ترقی کا نیا انجن بن گیا ہے، بیلٹ اینڈ روڈ سے وابستہ ممالک کی معاشی ترقی میں سیروسیاحت کے شعبے اہم کردار اد کر سکیں گے، جوشان جونگ

منگل مئی 18:03

چن جو (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 29 مئی2018ء) اقوام متحدہ کے ماتحت عالمی سیاحتی تنظیم کے ایگزیکٹیو ڈ ائریکٹر جوشان جونگ نے کہا ہے کہ چین عالمی سیروسیاحت کے شعبے کی ترقی کا نیا انجن بن گیا ہے، دی بیلٹ اینڈ روڈ سے وابستہ ممالک کی معاشی ترقی میں سیروسیاحت کے شعبے اہم کردار اد کر سکیں گے ۔ چائنہ ریڈیو انترنیشنل کے مطابق دی بیلٹ اینڈ روڈ سے وابستہ ممالک کے سیاحتی شہروں کے میئرز کا اجلاس چین کے شہر چن جو میں منعقد ہوا ۔

روس ، سری لنکااور بھارت سمیت اٹھائیس ممالک کے پچانوے سیاحتی شہروں کے میئرز یا ان کے مندوبین ، ساٹھ سے زائد بین الاقوامی ٹریولنگ ایجنسیوں اور اندرون چین کے انتالیس سیاحتی شہروں کے میئرز یا نائب میئرز نے مذکورہ اجلاس میں شرکت کی ۔ ایک تجزیہ نگار کا کہنا ہے کہ تاحال دی بیلٹ اینڈ روڈ سے وابستہ ممالک میں آنے جانے والے مسافروں کی تعداد پوری دنیا کی ستر فیصد کے لگ بھگ بنتی ہے ۔

(جاری ہے)

اقوام متحدہ کے ماتحت عالمی سیاحتی تنظیم کے ایگزیکٹیو ڈ ائریکٹر جوشان جونگ نے کہا کہ گزشتہ پانچ برسوں میں دوسرے ممالک کا سفر کرنے والے مسافروں میں سے اکیس فیصد چین سے تعلق رکھتے ہیں ۔ اسی طرح چین عالمی سیروسیاحت کے شعبے کی ترقی کا نیا انجن بن گیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ دی بیلٹ اینڈ روڈ سے وابستہ ممالک کی معاشی ترقی میں سیروسیاحت کے شعبے اہم کردار اد کر سکیں گے ۔