فرانسیسی صدر کا ترک صدر کو آمر کہنے پر لی پوائنٹ نامی میگزین کادفاع

جریدے کے خلاف کارروائی محض اسلئے کرنا کہ حق گوئی کا راستہ اختیار کیا کسی صورت انصاف پسندی نہیں، ماکرون

منگل مئی 18:11

پیرس(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 29 مئی2018ء) فرانسیسی صدر ایمانوئل ماکرون نے ترک صدر کو آمر کہنے پر لی پوائنٹ نامی میگزین کادفاع کرتے ہوئے کہا ہے کہ جریدے کے پوسٹرز کو محض اسلئے ہٹانا کہ اس نے آزادی کے دشمنوں کو ناراض کیا انصاف نہیں۔جریدے نے حق گوئی کی ہے۔

(جاری ہے)

غیر ملکی میڈیا کے مطابق فرانسیسی صدر ایمانوئل ماکروں نے ایک سیاسی جریدے کی جانب سے ترک صدر رجب طیب ایردوآن پر کی گئی تنقید کا دفاع کیا ہے۔

ماکروں کے مطابق یہ کسی صورت بھی قابل قبول نہیں ہے کہ لپوائنٹ نامی جریدے کے پوسٹرز کو دکانوں سے صرف اس وجہ سے ہٹا دیا جائے کہ اس نے آزادی کے دشمنوں کو ناراض کیا ہے۔ اس جریدے نے اپنے سرورق پر ترک صدر کی آمر کے عنوان سے ایک تصویر شائع کی ہے۔ ذرائع کے مطابق ایردوآن کے حامیوں نے جنوبی فرانس میں اخبارات اور کتابوں کی دکانوں سے یہ جریدے ہٹا دیے تھے۔

متعلقہ عنوان :