دریاخان:الیکشن 2018ء میں ضلع بھکر کی سیاسی صورت حال کے پیش نظرپی ٹی آئی اور آزاد امیدواروں کے درمیان مقابلہ رہے گا،ایک قومی اسمبلی کے حلقہ سے مسلم لیگ ن کا ٹکٹ ہولڈر ہونے کا امکان

منگل مئی 21:50

دریاخان (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 29 مئی2018ء) الیکشن 2018ء میں ضلع بھکر کی سیاسی صورت حال کے پیش نظرپی ٹی آئی اور آزاد امیدواروں کے درمیان مقابلہ رہے گا جبکہ ایک قومی اسمبلی کے حلقہ سے مسلم لیگ ن کا ٹکٹ ہولڈر ہونے کا امکان تفصیلات کے مطابق ضلع بھکر کی سیاست پر علاقائی دھڑوں کی اجارہ داری رہی ہے اور قومی و نظریاتی سیاست آج تک یہاں مظبوط نہ ہو سکی آزاد امیدوارکامیاب ہو کر بننے والی حکومتوں میں شامل ہوتے رہے اور قانونی پاپندی پر سیاسی جماعتوں کی چھتری تلے چلے جاتے رہے ہیں الیکشن 2018ء میں ضلع کی سیاسی صورت حال کے پیش نظر یہاں پرپی ٹی آئی اور آزاد امیدواروں کے درمیا ن سیاسی دنگل لگے گاکیونکہ پی ٹی آئی میں ایک مظبوط علاقائی دھڑا جبکہ آزاد حیثیت میں ضلع کا دوسرا مظبوط دھڑا الیکشن میں آمنے سامنے ہے موجودہ سیاسی صورت حال میں این اے 97سے عبدالمجیدخان خنان خیل ہی مسلم لیگ ن کے ٹکٹ پر ضلع میں واحد مسلم لیگ ن کے ٹکٹ ہولڈر ہونگے سیاسی حلقوں کے مطابق مسلم لیگ ن کے پاس نوانی گروپ کے علاوہ کوئی اور مظبوط امیدوار نہیں ہوسکتے ہیں نوانی گروپ مسلم لیگ ن سے سیاسی رابطوں کی تردیدکرچکا ہے ضلع کی سیاست میں تیسرے بڑے علاقائی دھڑے کے بننے کا کوئی امکان نہیں دیگرسیاسی جماعتوں کے امیدوار مقابلے کی پوزیشن میں ہی نہیں ہونگی