قومی احتساب بیورونے سوئی سدرن گیس کمپنی میں مبینہ خوردبرد پرایک اورریفرنس احتساب عدالت میں دائرکردیا

منگل مئی 22:02

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 29 مئی2018ء) قومی احتساب بیورونے سوئی سدرن گیس کمپنی میں مبینہ خوردبرد پرایک اورریفرنس احتساب عدالت میں دائرکردیا۔منگل کونیب نے احتساب عدالت میں سوئی سدرن گیس کمپنی میں ہونے والی ایک اور مبینہ کرپشن کے خلاف ریفرنس دائر کردیا۔نیب ریفرنس میں سابق ایم ڈی ایس ایس جی سی عظیم اقبال صدیقی ،چیف فنانشنل آفیسر شاہد حسین جعفری ،سی ای اوعباس حیدربلگرامی سمیت 8 ملزمان کونامزدکیاگیاہے۔

(جاری ہے)

ملزمان کے خلاف ریفرنس اختیارات کے نائزاستعمال اورغیرقانونی فوائدکے ذریعے قومی خزانے کوایک ارب سترہ کروڑ روپے کانقصان پہنچانے کے الزامات کے تحت دائر کیا گیا ہے۔نیب کے مطابق ملزمان نے نجی بنک سے پورٹ قاسم پرپلانٹ اورجیٹی کی تعمیر کے لیے 1.27 ارب روپے قرضہ حاصل لیا جبکہ ملزمان کی جانب سے قائم کی گئی کمپنی بنک کوقرضہ واپس کرنے میں بھی ناکام رہی ہے۔۔نیب حکام کے مطابق ملزمان نے بغیرکسی منظوری کے منصوبے کاتخمینہ دوارب پچیس کروڑ تک پہنچایا اور پروگیس پاکستان کمپنی کے اثاثے جان بوجھ کرغلط ظاہرکے دستخطوں س داخل کیاگیا