نام نہاد آزادی پسندوں نے بلوچستان کو تباہی کے دہانے پر پہنچادیا ہے،وزیراعلی بلوچستان

جس سے لوگوں کے روزگار تعلیم ، لوگوں کے رشتوں پر بھی کاری ضرب پڑا ہے، باپ کے قیام کا مقصد بلوچستان کے عوام کو ایک چھت فراہم کرنا ہے جس کے سائے تلے رہ کر سب خوشحالی کے سفر طے کر پائیں،میر عبدالقدوس بزنجو

منگل مئی 22:40

نام نہاد آزادی پسندوں نے بلوچستان کو تباہی کے دہانے پر پہنچادیا ہے،وزیراعلی ..
پنجگور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 29 مئی2018ء) وزیر اعلی بلوچستان میر عبدالقدوس بزنجونے کہا کہ نام نہاد آزادی پسندوں نے بلوچستان کو تباہی کے دہانے پر پہنچادیا ہے جس سے لوگوں کے زوزگار تعلیم ، لوگوں کے رشتوں پر بھی کاری ضرب پڑا ہے باپ کے قیام کا مقصد بلوچستان کے عوام کو ایک چھت فراہم کرنا ہے جس کے سائے تلے رہ کر سب خوشحالی کے سفر طے کر پائیں بلوچستان کے لوگ آگے بڑھنا چاہتے ہیں ترقی کے لیے امن ضروری ہے اور پاک فوج بلوچستان کی ترقی میں ہاتھ بھٹا رہی ہے اور مکران میں سی پیک روڑ کی تکمیل اور تعمیر میں پاک فوج کا کلیدی کردار رہا پنجگور میرا حلقہ ہے اور آواران پنجگور کے مسائل ایک جیسے ہیں وزیراعلی فنڈز پر عدالت نے پابندی عائد کی ہے اور اب میرے پاس ایسا کوئی فنڈز نہیں ہے کہ میں کسی کی مدد کرسکوں البتہ پنجگور آواران گچک روڈ کی منظوری میری حکومت کا سب سے بڑا کارنامہ ہے جس پر ڈھائی ارب روپے مختص کردیئے گئے ہیں اور آواران سے باقاعدہ کام کا آغاز کردیا گیا ہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے پنجگور پہنچنے کے بعد ڈی سی آفس میں مختلف وفود سرکاری اداروں کے سربراہوں اور میڈیا کے نمائندوں سے خطاب اور گفتگو کرتے ہوئے کیا ،پنجگور پہنچنے پر پولیس کے چاک وچوبند دستے نے وزیراعلی کو گارڈ اف انر پیش کیا اس دوران کمشنر مکران ایاز خان مندوخیل سکریٹری ایجوکیشن نورالحق سردار ظفراللہ گچکی ڈپٹی کمشنر میجر ر اورنگزیب بادینی چیرمین مالک صالح میر عمر جان ان کے ہمراہ تھے وزیراعلی بلوچستان میر عبدالقدوس بزنجو نے کہا کہ نام نہادآزادی پسندوں نے بلوچستان کے لوگوں کو مشکل میں ڈال دیا ہے آج بلوچستان میں زندگی جس موڑ پر، داخل ہوا ہے یہ سب نام نہاد آزادی کا نعرہ لگانے والوں کی وجہ سے ہے انہوں نے کہا کہ اب ان لوگوں کو اپنا نعرہ ترک کرکے واپس آنا چائیے تاکہ ان کی وجہ سے لوگ جن مشکلات سے گزررہے ہیں ان کا ازالہ ہوسکے وزیراعلی نے کہا کہ پنجگور آواران میر ا انتخابی حلقہ ہے اور پنجگور آواران کے مسائل ایک جیسے ہیں دونوں علاقے بلوچستان کے حالات سے متاثر رہے آزادی کا نعرہ لگانے والوں کو اب ان علاقوں پر رحم کرنا چائیے انہوں نے کہا کہ پنجگور آواران روڈ میری حکومت کا سب سے بڑا کارنامہ ہے روڈ کی تعمیر کے لیے ڈھائی ارب روپے مختص کردیئے گئیے ہیں جس پر آواران سے باقاعدہ کام کا آغاز کردیا گیا ہے انہوں نے کہا کہ پنجگور ایران بارڈر سے لوگوں کو مذید، ریلیف دلانے کے لیے میں متعلقہ اتھارٹیز سے بات کروں گا چونکہ بارڈر یہاں کے لوگوں کے روزگار کا ایک اہم ذریعہ ہے جس سے نہ صرف پنجگور بلکہ پورا بلوچستان مستعفید ہورہا ہے کوشش کریں گے کہ لوگوں کو مذید ریلیف مل سکے میر قدوس بزنجو نے کہا کہ پہلے وزیراعلی کا صوبدیدہ فنڈز ہوتا تھا مگر میرے وزیراعلی بنتے ہی فنڈز پر عدالت نے پابندی لگادی انہوں نے کہا کہ دورہ پنجگور کا مقصد، اپنے حلقہ کے مسائل جاننا ہے اب چونکہ میرے اقتدار اختتام کے قریب ہے علاقے کے لیے کوئی بڑا کام تو نہیں کرسکا لیکن پی ایس ڈی میں پنجگور کے اہم اسکیموں کو شامل کرنے میں کامیاب رہا ہوں انہوں نے سرکاری افسران پر زور دیا کہ وہ اپنے فرائض لگن اور نیک نیتی کے ساتھ سرانجام دیں انہوں نے کہا کہ بلوچستان کے لوگ آگے بڑھنا چاہتے ہیں اور باپ بلوچستان کے عوام کے لیے امید کی نئی کرن ہے اور ہم چاہتے کہ بلوچستان کے عوام کو باپ کے فلیٹ فارم پر یکجا کرکے خوشحالی کی طرف لے جائیں انسرجنسی سے جو معاشی اور معاشرتی تباہی ہوئی ہے اس بات سے بھی ہر شخص باخبر ہے چند لوگ جو پہاڑوں پر بیٹھ کر خود کوتو عذاب میں ڈال ہی چکے ہیں الٹا عوام بھی ان کی وجہ سے مشکلات کا شکارہیںانھیں چائیے کہ وہ تشدد کا راستہ ترک کرکے عوام کا فیصلوں پر تسلیم خم کریں کیونکہ بلوچستان کے لوگ اب تشدد اور انسرجنسی کے متحمل نہیں ہوسکتے وہ تعلیم صحت اور روزگار چاہتے ہیں ۔