شیخ رشید پر قسمت مہربان ہو گئی

عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید معجزانہ طور پر نااہلی سے بچ گئے

Muqadas Farooq مقدس فاروق اعوان بدھ مئی 11:34

شیخ رشید پر قسمت مہربان ہو گئی
لاہور(اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار۔30مئی 2018ء) معروف صحافی کامران خان کا کہنا تھا کہ عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید معجزانہ طور پر تا حیات نا اہل ہونے سے بچ گئے۔کیونکہ موجود اسمبلی دو دن بعد اپنی مدت مکمل کر لے گی۔ جس کے بعد شیخ رشید کی نا اہلی کا فیصلہ بے اثر ہو جائے گا۔تفصیلات کے مطابق معروف صحافی و تجزیہ نگار کامران خان کا دوران پروگرام کہنا تھا کہ سابق وزیراعظم نواز شریف اور پاکستان تحریک انصاف کے رہنما جہانگیر ترین کو تا حیات نا اہل قرار دیا گیا تھا تا ہم نا اہلی کی یہ تلوار عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید پر بھی لٹک رہی تھی۔

شیخ ریشد کے حوالے سے بھی نواز شریف اور جہانگیر ترین جیسی ہی شکایت تھی اور ان کے کیس کی بھی سماعت ہوئی تا ہم شیخ رشید کے کیس کے حوالے سے دلچسپ بات یہ ہے کہ شیخ ریشد کے کیس کی سماعت ہوئی اور کیس کا فیصلہ بھی محفوظ ہوا۔

(جاری ہے)

اور پچھلے دو ماہ سے زائد کے عرصے سے شیخ رشید نا اہلی کیس کا فیصلہ محفوظ ہے۔اور اس کے بعد یہ سوچ جنم لے رہی ہے کہ موجود اسمبلیاں دو دن بعد اپنی مدت مکمل کر رہی ہیں اور شیخ رشید کی تا حیات نا اہلی کے حوالے سے جو نا اہلی کی تلوار لٹک رہی تھی۔

اب وہ نہیں لٹک رہی۔کیونکہ جب وہ اسمبلیاں ہی موجود نہیں ہوں گی تو اگر شیخ رشید نا اہلی کیس کا فیصلہ آ بھی جائے تو شیخ رشید تا حیات نا اہل نہیں قرار پائیں گے۔گویا شیخ رشید معجزانہ طور پر تا حیات نا اہل ہونے سے بچ گئے۔یاد رہے کہ پاکستان مسلم لیگ ن کے رہنما شکیل اعوان نے عدالت میں یہ درخواست دائر کی تھی کہ عوامی مسلم لیگ کے سربراہ شیخ رشید نے 2013کے انتخابات میں کاغذات نامزدگی میں انے اثاثے چھپائے تھے۔اور غلط ڈیکلریشن جمع کروایا اس لیے شیخ ریشد کو نا اہل قرار دیا جائے۔تاہم شیخ شید نا اہلی کیس کا فیصلہ ابھی بھی محفوظ ہے اور موجودہ حکومت کی مدت پوری ہونے میں بھی دو دن باقی ہیں اس لیے شیخ رشید نا اہلی سے معجزانہ طور پر بچ گئے ہیں۔