بھارتی کرکٹ بورڈ کا پاکستان کے ساتھ کرکٹ سیریز کھیلنے یا نہ کھیلنے کی واضح پالیسی کی وضاحت اور رہنمائی کیلئے اپنی حکومت کو خط

۔آئی سی سی کی تنازعات کمیٹی میں بھارتی بورڈ کودر پیش مشکلات نے ہی بھارتی بورڈ کو خط تحریر کرنے پر مجبور کیا

بدھ مئی 13:57

ممبئی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 مئی2018ء) بھارتی کرکٹ بورڈ نے پاکستان کے ساتھ کرکٹ سیریز کھیلنے یا نہ کھیلنے کی واضح پالیسی کی وضاحت اور رہنمائی کیلئے اپنی حکومت کو خط تحریر کیا ہے۔میڈیا رپورٹس کے مطابق بھارتی کرکٹ بورڈ کا حکومت کو خط لکھنے کا مقصد تحریری جواب حاصل کرنا ہے جسیوہ آئی سی سی کی تنازعات کمیٹی میں سماعت کے وقت پیش کرکے ہزیمت سے بچ سکے اور اپنی پوزیشن کلیئر کرتے ہو ئے واضح کر سکے کہ بورڈ پاکستان سے کھیلنے کا حامی ہے لیکن حکومت کی پالیسی کے سامنے مجبور ہے۔

بھارتی بورڈ کے خط نے اس کے اپنے موقف کو بھی غلط ثابت کر دیا ہے جو وہ پاکستان کے ساتھ سیریز نہ کھیلنے کے حوالے سے اختیارکرتا ہے کہ پاکستان کیخلاف سیریز کیلئے حکومت اجازت نہیں دے رہی کیوں کہ بورڈ نے خط میں حکومت سے پاکستان کیخلاف سیریز کے بارے میں واضح پالیسی اور رہنمائی کی وضاحت تحریری طور پر مانگی ہے۔

(جاری ہے)

2014میںبگ تھری کی حمایت پربھارتی کرکٹ بورڈ نے پاکستان کیساتھ سیریز کھیلنے کا جو معاہدہ کیا تھا اس کی خلاف ورزی پرپاکستان کرکٹ بورڈ نے 70ملین ڈالرز ہرجانے کیلئے آئی سی سی کی تنازعات کمیٹی سے رجوع کررکھا ہے۔

آئی سی سی کی تنازعات کمیٹی میں بھارتی بورڈ کودر پیش مشکلات نے ہی بھارتی بورڈ کو خط تحریر کرنے پر مجبور کیا ہے۔۔بھارتی حکومت کی پاکستان کیخلاف کرکٹ سیریز کے انعقاد پرپالیسی کسی سے ڈھکی چھپی نہیں ہے لیکن بھارتی کرکٹ بورڈ آئی سی سی کی تنازعات کمیٹی میں اپنی پوزیشن کلیئر کرنے کے لئے حکومت کی جانب سے پالیسی کو تحریرمیں چاہتا ہے تاکہ جواذ پیش کرسکے کہ بورڈ پاکستان سے کھیلنے کیلئے تیار ہے لیکن حکومتی پالیسی کے باعث مجبور ہے۔

متعلقہ عنوان :