ڈکیتی اور چوری کی 8مختلف وارداتوں میں شہری نقدی و قیمتی سامان سے محروم

بدھ مئی 16:07

سرگودھا۔30 مئی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 مئی2018ء) ڈکیتی اور چوری کی 8مختلف وارداتوں میں عوام کو لاکھوں روپے مالیت کے قیمتی سامان سے محروم کر دیا گیا ۔تفصیلات کے مطابق علی ٹائون کے قریب دو نامعلوم افراد نے فاروق نامی شخص کو اسلحہ کے زور پر روک کر موٹرسائیکل ،نقدی اور موبائل فون چھین کر فرار ہوگئے ۔بھلوال کے قریب تین مسلح افراد نے علامہ اقبال ٹائون کے رھائشی غلام نبی کا ملازم بنک سے تین لاکھ چالیس ہزار روپے لیکر جارھا تھا کہ مسلح افراد نے گن پوائنٹ پر روک لیا اور نقدی چھین کر فرار ہوگئے ۔

خیام چوک میں چک 104جنوبی کے علی رضا کا موٹر سائیکل سٹی لیب کے باہر سے نامعلوم افراد نے چوری کر لے ۔سلانوالی کے ناصر عباس کے گھر کے تالے توڑ کر نامعلوم افراد سونا ،چاندی اور گھریلوسامان چوری کرکے لے گئے ۔

(جاری ہے)

127جنوبی کے طلحہ محمد کے ڈیرہ سے نامعلوم افراد 80ہزار روپے مالیت کے بکرے چوری کر کے لے گئے ۔سیدوآنہ کے اکرام اللہ کے ڈیرہ سے 6افراد 2لاکھ 85ہزار مالیت کی دو بھینس چوری کھول کر لے گئے ۔

جبکہ ٹرسٹ پلازہ سے بلاک نمبر 13 کے سہیل کا دوکان کے باہر سے چوری ہوگیا ۔۔پولیس نے ملزمان کے خلاف الگ الگ مقدمات درج کرلئے ہیں ۔اس کے علاوہ دھوکہ دہی اور فراڈ کے دو مختلف واقعات میں شہر یوں 18لاکھ روپے کی رقم سے محروم کر دیا گیا ۔۔پولیس ذرائع کے مطابق للیانی کے محمد خان نے لین دین پر محمد شبیر کو دس لاکھ روپے نقددئے جس کے تقاضے محمد شبیر نے محمد خان کو چیک دئے دیا جو بنک سے کیش نہ ہو سکا پولیس نے ملزم کے خلاف مقدمہ درج کرلیا ہے جبکہ جھال چکیاں کے اللہ داد نے تین افراد وارث ،عارف اور محمد اکبر کو اپنے گاڑی فروخت کی جس پر ملزمان نے شہری کو 8لاکھ روپے خردبرر کر لیا ۔۔پولیس نے مقدمہ درج کرلیا ۔