تارکین وطن کی فوری شکایات کے ازالے اور ان کو مدد فراہم کرنے کیلئے آٹھ ایئرپورٹس پر ڈیسک قائم کر دئیے گئے ہیں، چیئرمین اوورسیز پاکستانیز فاونڈیشن بیرسٹر امجد ملک

بدھ مئی 16:15

اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 مئی2018ء) اوورسیز پاکستانیز فاونڈیشن کے چیئرمین بیرسٹر امجد ملک نے کہا ہے کہ تارکین وطن کی فوری شکایات کے ازالے اور ان کو مدد فراہم کرنے کے لئے آٹھ ایئرپورٹس پر ڈیسک قائم کر دئیے گئے ہیں۔ بیرسٹر امجد ملک نے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ دنیا بھر میں مقیم 80 لاکھ تارکین وطن کو ووٹ کے حق سے محروم نہیں رکھا جا سکتا، وفاقی حکومت سپریم کورٹ اور الیکشن کمیشن کو صورتحال کا جائزہ لے کرداد رسی کا ذریعہ پیدا کرنا چاہئے۔

انہوں نے بتایا کہ سعودی عرب سے پاکستانیوں کی واپسی زرمبادلہ میں کمی کا باعث بنے گی اور پاکستانی لیبر کی مشکلات بڑھیں گی، ملکی لیبر کو نوکریاں دلانے کے لئے نئی مارکیٹیں تلاش کرنا ہوں ہوں گی۔ انہوں نے کہاکہ دنیا بھر کی جیلوں میں قید پاکستانیوں کی وطن واپسی کے لئے بیرون ملک قانون اور زبان پر عبور رکھنے والے قونصلر تعینات ہونے چاہئیں۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ حادثات کے شکار تارکین وطن کے اہل خانہ کو معاوضہ جات کی مد میں 80 ملین کی رقم خرچ کی گئی۔ انہوں نے بتایا کہ تارکین وطن کی فوری شکایات کے ازالے اور ان کو مدد فراہم کرنے کے لئے آٹھ ائرپورٹس پر ڈیسک قائم کر دئیے گئے ہیں، ادارے کی کارکردگی کا جائزہ لینے کے لئے سالانہ کارکردگی رپورٹ بھی جاری کی گئی ہے۔ آئندہ انتخابات کے حوالے سے ان کا کہنا تھا کہ سیاستدانوں کے احتساب کے لئے انتخابات سے بہتر کوئی ذریعہ نہیں، انتخابات میں حصہ لینا عام آدمی کی دسترس سے باہر نکل چکا ہے، الیکشن کمیشن کو اس معاملے پر غور کرنا چاہئیے۔

انہوں نے کہا کہ اداروں کو چاہئیے کہ شفافیت کو یقینی بنانے کے لئے اپنا کردار ادا کریں جبکہ عام آدمی کو فوری انصاف کی فراہمی کے لئے قانونی اصلاحات وقت کی اہم ضرورت ہے۔