کشمیری شملہ معاہدہ اور لائن آف کنٹرول کو نہیں مانتے ‘ایل او سی کی حیثیت سیز فائر لائن کی ہے ہم شملہ معاہدہ کے پابند نہیں ہیں ‘میرے جیتے جی تقسیم کشمیر نہیں ہو سکتی مسلم لیگ ن کی حکومت پاکستان سے رخصت ہو رہی ہے اور آزاد کشمیر سے بھی جلد فارغ ہونے والی ہے

پی ٹی آئی آزاد کشمیر کے صدر و سابق وزیر اعظم بیرسٹرسلطان محمود چوہدری کی صحافیوں سے بات چیت

بدھ مئی 17:12

کھوئی رٹہ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 مئی2018ء) پی ٹی آئی آزاد کشمیر کے صدر و سابق وزیر اعظم بیرسٹرسلطان محمود چوہدری نے کہا ہے کہ کشمیری شملہ معاہدہ اور لائن آف کنٹرول کو نہیں مانتے ایل او سی کی حیثیت سیز فائر لائن کی ہے ہم شملہ معاہدہ کے پابند نہیں ہیں میرے جیتے جی تقسیم کشمیر نہیں ہو سکتی مسلم لیگ ن کی حکومت پاکستان سے رخصت ہو رہی ہے اور آزاد کشمیر سے بھی جلد فارغ ہونے والی ہے ان خیالات کا اظہار انہوں نے سابق امیدوار اسمبلی نثار انصر ابدالی کے گرینڈ افطار ڈنر کے موقع پر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا بیرسٹر سلطان محمود چوہدری نے کہا کہ پاکستان کشمیریوں کی وکالت کا حق ادا کر ے شملہ معاہدہ میں ہم فریق نہیں ہیں اور نہ ہی اسے ماننے کے پابند ہیں سیز فائر لائن کی حیثیت تبدیل نہیں ہو سکتی ایل او سی کو ہم نہیں مانتے انہوں نے کہا کہ پاکستان میں کرپشن جھوٹ دھاندلی کی خاتمہ ہونے والا ہے آزاد کشمیر حکومت بھی دھاندلی کی پیداوار ہے اسکا بوریا بستر جلد گول ہو جائے گا انہوں نے کہا کہ میاں نواز شریف نے ممبئی حملوں کے تناظر میں غیر ذمہ دارانہ بیان دیکرامریکہ اسرائیل انڈیا گٹھ جوڑ کو جواز فراہم کیا ہے کہ وہ پاکستان پر حملہ آور ہوں جب تک ایک بھی کشمیری زندہ ہے کوئی مائی کا لعل پاکستان کی طرف میلی آنکھ سے نہیں دیکھ سکتا کشمیری مسلح افواج پاکستان کے ساتھ شانہ بشانہ کھڑے ہیں انڈیا کے ظلم و بربریت کے آگے کشمیری قوم کبھی ہار نہیں مانے گی اور ہماری تحریک آزاد ی کی جدوجہد جاری رہے گی ۔