آئندہ انتخابات میں پی ٹی آئی وفاق میں بلا شرکت غیرے حکومت بنائے گی‘ سینیٹر فیصل جاوید

عمران خان نے اس ملک میں کرپشن کیخلاف جہاد شروع کیا ‘بڑے بڑے مگر مچھوں کا ملکی تاریخ میں پہلی بار احتساب ہو رہا ہے، مسلم لیگ(ن) کے تمام ترقیاتی کام صرف اشتہاروں میں نظر آتے ہیں جن کا حقیقت سے کوئی تعلق نہیں ہے‘ لاہور کے علاوہ تمام پنجاب محرومیوں اور پریشانیوں کا شکار ہے پاکستان تحریک انصاف کے سینیٹر جاوید فیصل کی پارلیمنٹ ہائوس کے باہر میڈیا سے گفتگو

بدھ مئی 22:36

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 مئی2018ء) پاکستان تحریک انصاف کے سینیٹر جاوید فیصل نے کہا ہے کہ آئندہ انتخابات میں پی ٹی آئی وفاق میں بلا شرکت غیرے حکومت بنائے گی،عمران خان نے اس ملک میں کرپشن کے خلاف جہاد شروع کیا تھا بڑے بڑے مگر مچھوں کا ملکی تاریخ میں پہلی بار احتساب ہو رہا ہے، مسلم لیگ(ن) کے تمامترقیاتی کام صرف اشتہاروں میں نظر آتے ہیں جن کا حقیقت سے کوئی تعلق نہیں ہے، لاہور کے علاوہ تمام پنجاب محرومیوں اور پریشانیوں کا شکار ہے، خیبر پختونخواملک کا واحد صوبہ ہے جہاں حقیقی معنوں میں ترقی ہوئی ہے ۔

وہ بدھ کو پارلیمنٹ ہائوس کے باہر میڈیا سے گفتگو کر رہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان میں خیبر پختونخوا واحد صوبہ ہے جہاں حقیقی معنوں میں ترقی ہوئی ہے جس کی گوائی بین الاقوامی ادارے بھی دے رہے ہیں۔

(جاری ہے)

پاکستان تحریک انصاف نے خیبر پختونخومیں صحت، تعلیم اور اقتصادی شعبوں میں انقلاب لایا ہے۔ جب2013میں ہم نے حکومت سنبھالی تو کے پی پاکستان کا سب سے کرپٹ صوبہ تھا، ہم پولیس کے نظام میں اصلاحات لیکر آئے اور پولیس کو غیر سیاسی کیا جس کے نتیجے میں آج کے پی پاکستان کا سب سے تیزی سے ترقی کرتا ہوا صوبہ ہے۔

پنجاب میں مسلم لیگ(ن) کی حکومت نے کرپشن کے نئے روکارڈ قائم کیے ہیں۔ لاہور کے علاوہ تمام پنجاب محرومیوں اور پریشانیوں کا شکار ہے۔ مسلم لیگ(ن) کے تمام کام صرف اشتہاروں میں نظر آتے ہیں جن کا حقیقت سے کوئی تعلق نہیں ہے۔ ملک میں لوڈشیڈنگ، مہنگائی بڑھ گئی ہے ۔پاکستان تحریک انصاف انتخابات کیلئے مکمل طور پر تیار ہے۔ پارٹیوں کے اندر چھوٹے موٹے اختلافات ہوتے رہتے ہیں جن سے جماعتوں کی کارکردگی پر فرق نہیں پڑتا۔ آئندہ انتخابات میں پی ٹی آئی وفاق میں بلا شرکت غیرے حکومت بنائے گی اور عمران خان اس ملک کے اگلے وزیر اعظم ہوں گے۔ عمران خان نے اس ملک میں کرپشن کے خلاف جو جہاد شروع کیا تھا اس کے نتیجے میں بڑے بڑے مگر مچھوں کا ملکی تاریخ میں پہلی بار احتساب ہو رہا ہی