یوکرائن اور کریمیا سے مکمل انخلا تک روس پر عائد پابندیاں جاری رہیں گی،امریکہ

یوکرائن میں روسی کارروائیوں پر امریکہ کی شدید مذمت، روس مثبت طرز عمل اپنائے اور خود کو تنہا ہونے سے بچائے،نکی ہیلے

بدھ مئی 22:28

نیویارک(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 مئی2018ء) امریکہ کی اقوام متحدہ کے لئے مستقل نمائندہ نکی ہیلے نے کہا ہے کہ یوکرائن اور کریمیا سے مکمل انخلا تک روس پر عائد پابندیاں جاری رہیں گی،،امریکہ یوکرائن میں روسی کارروائیوں کی شدید مذمت کرتا ہے، روس مثبت طرز عمل اپنائے اور خود کو تنہا ہونے سے بچائے۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق امریکہ کی اقوام متحدہ کے لئے مستقل نمائندہ نکی ہیلے نے کہا ہے کہ جب تک روس یوکرائن اور کریمیا سے نہیں نکل جاتا اس پر عائد پابندیاں جاری رہیں گی۔

ہیلے نے یوکرائن کی پیش رفتوں سے متعلق اقوام متحدہ کیاجلاس سے خطاب میں کہا ہے کہ ہم یوکرائن کے مشرق میں روس کی کاروائیوں اور کریمیا کے الحاق کی شدت سے مذمت کرتے ہیں۔انہوں نے کہا کہ جب تک روس یوکرائن میں اپنی مذموم کاروائیوں کو بند نہیں کرتا امریکہ کے طرز عمل میں تبدیلی نہیں آئے گی۔

(جاری ہے)

ہیلے نے کہا کہ جب تک روس،، کریمیا کو یوکرائن کے حوالے نہیں کر دیتا، یوکرائن کے مشرق سے انخلا نہیں کرتا اور منسک سمجھوتے کا اطلاق نہیں کرتا اس وقت تک ہماری پابندیاں جاری رہیں گی۔

انہوں نے روس سے ملایشیا ائیر لائنز کے MH17 طیارے کو گرائے جانے کی ذمہ داری قبول کرنے اور اس سے متعلق جاری تحقیقات کے ساتھ تعاون کرنے کی بھی اپیل کی ہے۔دوسری طرف روس کے اقوام متحدہ کے مستقل نمائندے واسیلے نبنزیا نے امریکہ پر تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ امریکہ روس مخالف پروپیگنڈہ کر رہا ہے۔۔روس کے کسی کے ساتھ بھی جنگ کی حالت میں نہ ہونے کا ذکر کرتے ہوئے نبنزیا نے یوکرائن کو فائر بندی کی خلاف ورزی کرنے اور جھڑپوں کو ہوا دینے کا قصوروار ٹھہرایا ہے۔