نیلم جہلم ہائیڈرو پاور پراجیکٹ کے دوسرے یونٹ نے بھی آزمائشی بنیاد پر بجلی کی پیداوار شروع کر دی

منصوبے کے یونٹ نمبر2کو کامیابی کے ساتھ قومی نظام سے منسلک کر دیا گیا، 185 میگاواٹ تک بجلی پیدا کی یونٹ نمبر 2کو بتدریج اِس کی پوری پیداواری صلاحیت یعنی 242اعشاریہ 25میگاواٹ تک لے جایا جائے گا

بدھ مئی 17:17

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 مئی2018ء) نیلم جہلم ہائیڈرو پاور پراجیکٹ کے یونٹ نمبر2 نے بھی مکینیکل ٹیسٹ رن کامیابی کے ساتھ مکمل کر لیا ہے جس کے بعد اِس یونٹ کو قومی نظام کے ساتھ منسلک کردیا گیا ہے ۔ مذکورہ یونٹ نے آزمائشی طور پر بجلی کی پیداوار شروع کر دی ہے۔ ٹیسٹ رن کے دوران اِس یونٹ نے 185میگاواٹ تک بجلی پیدا کی ۔ اِس یونٹ کو بتدریج پوری پیداواری صلاحیت یعنی 242اعشاریہ 25میگاواٹ تک لے جایا جائے گا ۔

کنٹریکٹ کے قواعد و ضوابط کی رو سے یونٹ نمبر2 کو بھی کمرشل آپریشن سے پہلے ریلائی ایبلٹی ٹیسٹ اور ریلائی ایبلٹی پیریڈ کے مراحل سے گزارا جائے گا۔ یہ امر قابلِ ذکر ہے کہ 18 مئی سے نیلم جہلم پراجیکٹ کا یونٹ نمبر3 اپنے 30روزہ ریلائی ایبلٹی پیریڈ سے گزر رہا ہے اور قومی نظام کو اپنی پوری پیداواری صلاحیت کے مطابق 242اعشاریہ 25میگاواٹ بجلی فراہم کررہاہے ۔

(جاری ہے)

نیلم جہلم ہائیڈرو پاور پراجیکٹ سے اب تک قومی نظام کوتقریباً 9 کروڑ یونٹ بجلی مہیا کی جاچکی ہے ۔۔بجلی کی یہ مقدار تقریبا ایک ارب روپے آمدنی کے مساوی ہے۔ نیلم جہلم پراجیکٹ کی مجموعی پیداواری صلاحیت 969میگاواٹ ہے ۔ اِس کے 4پیداواری یونٹ ہیں، جن میں سے ہر ایک کی پیداواری صلاحیت 242اعشاریہ 25 میگاواٹ ہے ۔ پراجیکٹ کے چاروں یونٹ اِس سال جولائی تک مرحلہ وار مکمل ہوں گے ۔

متعلقہ عنوان :