پتنگ کا انتخابی نشان میری اور عامر خان کی درخواستوں پر الاٹ کیاگیا،اس پر سیاست نہیں ہونی چاہیے ،فاروق ستار

اسلام آباد ہائیکورٹ کے عبوری حکم کے مطابق پارٹی کی سربراہی اور کنونیئر شپ میرے پاس ہے،جنوبی سندھ صوبے کی تحریک چلانا ضروری ہے ،پریس کانفرنس

بدھ مئی 17:42

پتنگ کا انتخابی نشان میری اور عامر خان کی درخواستوں پر الاٹ کیاگیا،اس ..
کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 مئی2018ء) ایم کیو ایم کے رہنما ڈاکٹر فاروق ستار نے کہا ہے کہ الیکشن کمیشن نے ایم کیو ایم پاکستان کو پتنگ کا انتخابی نشان میری اور عامر خان کی درخواستوں پر الاٹ کیا جس پر سیاست نہیں ہونی چاہیے ۔ اسلام آباد ہائی کورٹ کے عبوری حکم کے مطابق پارٹی کی سربراہی اور کنونیئر شپ میرے پاس ہے۔بد ھ کو پی آئی بی کراچی میں پریس کانفرنس کرتے ہوے ڈاکٹر فاروق ستار نے کہا کہ الیکشن کمیشن نے ایم کیو ایم پاکستان کو انتخابی نشان پتنگ الاٹ کردیا ہے اور پتنگ کا نشان الاٹ ہونے پر ایم کیو ایم کے کارکنان اور ورٹرز کو مبارکباد کو پیش کرتا ہوں۔

انہوں نے کہا کہ پتنگ کا نشان میری اور عامر خان کی درخواستوں پر الاٹ کیا گیا اور پتنگ کا نشان ملنے پر سیاست نہیں ہونی چاہیے تاہم کل اس پر سیاست کی گئی جس کا مجھے افسوس ہے لیکن اگر اس پر ہم سیاست کرینگے تو مسائل کیسے حل ہونگے۔

(جاری ہے)

انہوںنے کہا کہ اسلام آباد ہائیکورٹ کے عبوری حکم کے مطابق پارٹی کی سربراہی اور کنونیئر شپ میرے پاس ہے۔انہوں نے کہا کہ جنوبی سندھ کے مطالبے پر مجبور ہیں اور جنوبی سندھ کی تحریک چلانا ضروری ہے اور ہم چاہتے ہیں کہ سندھ کولسانی نہیں انتظامی بنیاد پرتقسیم ہونا چاہے۔ فاروق ستار نے کہا کہ مردم شماری میں ہمارا کم گناجانا پری پلان دھاندلی کی سازش ہے اور ہمارا مطالبہ ہے کہ مردم شماری کی پانچ فیصد کا آڈٹ ہونا چاہیے۔