سپریم کورٹ نے چیئرمین اور وائس چیئرمین ضلع کونسل خوشاب کا الیکشن دوبارہ کرانے کیخلاف سمیرا ملک کی نظرثانی کی اپیل خارج کر دی

بدھ مئی 18:06

سپریم کورٹ نے چیئرمین اور وائس چیئرمین ضلع کونسل خوشاب کا الیکشن دوبارہ ..
اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 مئی2018ء) سپریم کورٹ نے چیئرمین اور وائس چیئرمین ضلع کونسل خوشاب کا الیکشن دوبارہ کرانے کیخلاف سابق رکن قومی اسمبلی سمیرا ملک کی جانب سے دائر نظرثانی کی اپیل خارج کرتے ہوئے کیس نمٹادیا ہے۔ بدھ کو جسٹس مشیر عالم کی سربراہی میں تین رکنی بنچ نے سمیرا ملک کی جانب سے دائر درخواست کی سماعت کی۔ یاد رہے کہ قبل ازیں سپریم کورٹ نے چیئرمین اور وائس چیئرمین ضلع کونسل خوشاب کے الیکشن میں دھاندلی کے الزامات کے تحت ضلع کونسل میں دوبارہ الیکشن کرانے کا حکم دیا تھا جس کیخلاف سمیرا ملک نے نظرثانی کی درخواست دائر کی تھی، سماعت کے موقع پردرخواست گزارکے وکیل نے پیش ہوکر عدالت کے روبرو موقف اپنایا کہ چیئرمین ضلع کونسل خوشاب کے الیکشن میں ووٹ کا تقدس ہرگز پامال نہیں ہوا ہے، اس حوالے سے بے بنیاد الزامات لگائے گئے تھے۔

(جاری ہے)

فاضل وکیل نے مزید کہاکہ لوگ اس بات کے گواہ ہیں کہ الیکشن میں دھاندلی نہیں ہوئی ہے، دوسری جانب اس معاملے کے بارے میں پریزائیڈنگ افسر کا بیان بھی ریکارڈ پر موجود ہے، اس لئے استدعا ہے کہ عدالتی فیصلے پرنظرثانی کی جائے ، بنچ کے سربراہ نے نظرثانی کی درخواست کاجائزہ لینے کے بعد فاضل وکیل سے کہاکہ نظرثانی کی درخواست میں ایسی کوئی بنیاد نہیں جس کو مدنظر رکھ کر عدالتی فیصلے پر نظرثانی کی جائے، اس بات کا فیصلہ عدالت نے کرنا ہوتا ہے کہ الیکشن کے دوران ووٹ کی حرمت کا خیال رکھا گیا یا نہیں۔ جسٹس فائز عیسٰی نے کہا کہ اس کیس میں یہ بات ریکارڈ پر ہے کہ ووٹ کی حرمت کا خیال نہیں رکھا گیا، بعدازاں عدالت نے سمیراملک کی نظرثانی درخواست خارج کردی۔