نگران وزیراعلیٰ کا فیصلہ ابھی تک نہ ہوسکا، اسمبلی کی مد ت ختم ہونے کے بعد تین دن میں پارلیمانی کمیٹی اس کا فیصلہ کریگی،سعید احمد ہاشمی

پھر بھی فیصلہ نہ ہوا تو8روز بعد الیکشن کمیشن خود فیصلہ کریگا ،بلوچستان عوامی پارٹی کو صوبے سمیت ملک بھر میں توسیع دیں گے ،پریس کانفرنس

بدھ مئی 19:00

کوئٹہ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 مئی2018ء) بلوچستان اسمبلی پارٹی کے بانی سعید احمد ہاشمی نے کہا ہے کہ نگران وزیراعلیٰ کا فیصلہ ابھی تک نہیں ہوسکا اسمبلی کی مد ت ختم ہونے کے بعد تین دن میں پارلیمانی کمیٹی اس کا فیصلہ کریں گی اگر پھر بھی فیصلہ نہ ہوا تو8روز بعد الیکشن کمیشن خود فیصلہ کریگا بلوچستان عوامی پارٹی کو صوبے سمیت ملک بھر میں توسیع دیں گے لوگوں کی بڑی تعداد میں شمولیت پارٹی کے عوامی منشور کی عکاس ہے ان خیالات کا اظہارانہوں نے بدھ کو ہاشمی ہائوس میں پریس کانفرنس کے دوران کیا، اس موقع پر ریٹائرڈ سینئر بیوروکریٹ شہباز مندوخیل نے اپنے سینکڑوں ساتھیوں سمیت پارٹی میں شمولیت کا اعلان کیا پریس کانفرنس میں صوبائی مشیر خزانہ ڈاکٹر رقیہ ہاشمی ، پارٹی کے مرکزی سیکرٹری جنرل وزیراعلیٰ کے مشیر منظور احمد کاکڑ، ملک خدابخش لانگو، میر اسماعیل لہڑی، چوہدری شبیر اور دیگر بھی موجود تھے سعید احمد ہاشمی نے کہا کہ شہباز مندوخیل کے ساتھ ہمارے دیرینہ تعلقات ہیں ان کی بلوچستان کے لئے بڑی خدمات ہیں اور یہ بلوچستان کے مسائل سے بخوبی آگاہ ہیں ہماری کوشش تھی کہ پارٹی میں توسیعی مہم کا آغاز پشتون بیلٹ سے کریں جس کی ابتدا ء آج ہوگئی ہے انہوں نے کہا کہ شہباز مندوخیل سے ہمارے دیرینہ تعلقات ہیں ان کی بلوچستان کے لئے بڑی خدمات ہیںاور بلوچستان کے مسائل سے بخوبی آگاہ ہیں ہمیں امید ہے کہ یہ پارٹی کے پروگرام کو آگے بڑھانے کے لئے اپنا بھر پور کردار ادا کریں گے پارٹی کے صوبائی جنرل سیکرٹری و مشیر وزیراعلیٰ منظور احمد کاکڑ نے کہا کہ ان کی اور ان کے ساتھیوں کی شمولیت سے پارٹی مزید فعال ہوگئی بلوچستان کے لئے ان کے 40سالہ خدمات ہیں بلوچستان کے مسائل کے حل کے لئے ان کی اچھی ریسرچ شامل رہی ہے ،انہوں نے کہا کہ ژوب عوام 40سالہ وابستگی رکھنے والے لوگوں سے مایوس ہوچکے ہیں اب بلوچستان عوامی پارٹی نے انہیں اپنا پلیٹ فارم مہیا کیا ہے انہوں نے کہا کہ ہم پارٹی کو صوبے کے علاوہ ملک گھیر حیثیت دلائیں گے ہماری پارٹی ایک سوچ رکھتی ہیں اور اس کا ایک وژن ہیں صوبائی مشیر خزانہ ڈاکٹر رقیہ ہاشمی نے کہا کہ شہباز مندوخیل کی شمولیت خوش آئند ہے انہوں نے بحیثیت بیوروکریٹ خواتین کے لئے بھی بہت سے کام کئے ہیں اورہمیں امید ہے کہ ان کی خدمات سے پارٹی اور صوبے کے عوام مستفیدہونگے قبل ازیں شہباز مندوخیل نے کہا کہ ملازمت کے بعد وہ سوچ رہے تھے کہ کسی سیاسی جماعت میں شمولیت اختیار کریں جس کے لئے میں نے بلوچستان عوامی پارٹی کا انتخاب کیا اس کا منشور صوبے کے تمام عوام کے حق میں ہیں انہوں نے کہا کہ وہ ژوب میں پارٹی کو فعال بنانے کے لئے اپنا بھر پور کرداد اداکریں گے ۔