نئے چینل پی ٹی وی پارلیمنٹ سے قومی اسمبلی اور سینٹ میں عوامی نمائندوں کے کام سے متعلق لوگوں کی رائے تبدیل ہو گی، سپیکر کی حیثیت سے عوام کی آگاہی کے لئے پارلیمنٹ کو سب کیلئے کھول دیا ہے، ملک بھر سے مختلف یونیورسٹیوں، کالجوں اور سکولوں کے وفود نے پارلیمنٹ کا دورہ کیا، 200 انٹرنیز نے پارلیمنٹ سے انٹرن شپ مکمل کی ہے اور سوشل میڈیا پر سینٹ اور قومی اسمبلی کے کردار کو اجاگر کر رہے ہیں، پاکستانی پارلیمنٹ دنیا کی پہلی گرین پارلیمنٹ ہے کیونکہ یہ مکمل طور پر شمسی توانائی پر منتقل ہو چکی ہے

سپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق کا ’’پی ٹی وی پارلیمنٹ ‘‘چینل کی افتتاحی تقریب سے خطاب

بدھ مئی 19:10

اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 مئی2018ء) سپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق نے کہا ہے کہ نئے چینل پی ٹی وی پارلیمنٹ سے قومی اسمبلی اور سینٹ میں عوامی نمائندوں کے کام سے متعلق لوگوں کی رائے تبدیل ہو گی۔ بدھ کو پارلیمنٹ کے چینل کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے سپیکر قومی اسمبلی نے کہا کہ پارلیمنٹ کے چینل کا بنیادی مقصد لوگوں کو ان کے نمائندہ کی حیثیت سے ارکان پارلیمنٹ کی طرف سے اٹھائے گئے مسائل سے متعلق آگاہی کی فراہمی ہے۔

انہوں نے کہا کہ لوگوں میں یہ تاثر عام تھا کہ پارلیمنٹ اور اس کی قائمہ کمیٹیاں بہت کم کام کر رہی ہیں تاہم نئے چینل سے یہ سوچ تبدیل کرنے میں مدد ملے گی۔ سردار ایاز صادق نے کہا کہ انہوں نے سپیکر کی حیثیت سے پارلیمنٹ کو سب کیلئے کھول دیا تاکہ لوگ دونوں ایوانوں کے کام سے متعلق آگاہی حاصل کر سکیں۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ ملک بھر سے مختلف یونیورسٹیوں، کالجوں اور سکولوں کے وفود نے پارلیمنٹ کا دورہ کیا اور اجلاسوں کی کارروائی دیکھی۔

طالب علموں کے دوروں کے بعد ان کی سوچ میں تبدیلی آئی ہے کیونکہ انہیں معلوم ہوا کہ ایوان کس طرح کام کرتا ہے۔ سپیکر قومی اسمبلی نے کہا کہ 200 انٹرنیز نے پارلیمنٹ سے انٹرن شپ مکمل کی ہے اور وہ سوشل میڈیا پر سینٹ اور قومی اسمبلی کے کردار کو اجاگر کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ یہ پارلیمنٹ کی بڑی کامیابی ہے کہ ہائیر ایجوکیشن کمیشن کے تعاون سے 26 یونیورسٹیوں نے پارلیمنٹری سٹڈیز کو نصاب میں شامل کیا ہے۔

پارلیمنٹ سے متعلق اصلاحات کمیٹی کا حوالہ دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ کمیٹی نے عوام سے تجاویز طلب کیں جس پر 400 صفحات پر مشتمل تجاویز موصول ہوئیں جن کو بعد میں قانون کی شکل دی گئی۔ انہوں نے کہا کہ پاکستانی پارلیمنٹ دنیا کی پہلی گرین پارلیمنٹ ہے کیونکہ یہ مکمل طور پر شمسی توانائی پر منتقل ہو چکی ہے۔ سپیکر قومی اسمبلی نے پارلیمنٹ کے چینل کے آغاز کیلئے وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات مریم اورنگزیب اور سیکرٹری اطلاعات و نشریات احمد نواز سکھیرا کی کی کاوشوں کو سراہا۔