سیاسی کار کنوں کا جوتے رکھ کراسرائیلی مظالم کے خلاف احتجاج

یورپی یونین کی عمارت کے سامنے 4 ہزار 500 جوتوں کے جوڑے رکھے گئے

بدھ مئی 21:12

برسلز(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 مئی2018ء) برسلز میں سیاسی کار کنوں یورپی یونین کی عمارت کے سامنے جوتے رکھ کراسرائیلی مظالم کے خلاف احتجاج کیا، یورپی یونین کی عمارت کے سامنے 4 ہزار 500 جوتوں کے جوڑے رکھے گئے۔غیر ملکی میڈیا رپورٹس میں کہا گیا ہے کہ برسلز میں سیاسی کارکنوں نے یورپی یونین کی عمارت کے سامنے جوتے رکھ کر فلسطینیوں پر اسرائیل کے مظالم کے خلاف احتجاج کیا۔

(جاری ہے)

غیر ملکی خبررساں ادارے کے مطابق بیلجیئم کے دارالحکومت برسلز میں یورپی یونین کی پارلیمنٹ کے باہر سیاسی کارکنوں اور رضاکاروں نے فلسطین پر اسرائیلی مظالم کے خلاف تاریخ کا انوکھا احتجاج کیا۔ کارکنوں نے یورپی یونین کی عمارت کے سامنے 4 ہزار 500 جوتوں کے جوڑے رکھے کر احتجاج کیا۔۔یورپی یونین کی عمارت کے سامنے جوتے رکھنے کا مقصد پرامن اندازمیں یورپی ممالک کے نمائندوں کو باورکرانا تھا کہ ہماری ہمدردیاں فلسطین کے ساتھ ہیں جب کہ مظاہرین نے یورپی پارلیمنٹ کے باہر ایک فلسطین کا بڑا جھنڈا بھی لہرایا۔