سمندری طوفان ماریاسے 4600افراد ہلاک ہوئے، امریکی یونیورسٹی کی رپورٹ نے حکومتی دعوئوں کی قلعی کھول دی

بدھ مئی 21:12

نیو یارک(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 مئی2018ء) امریکی یونیورسٹی کی رپورٹ نے حکومتی دعوئوں کی قلعی کھول دی، شمالی امریکی جزائر پر مبنی ملک پورٹو ریکو میں سمندری طوفان ماریاسے 4600افراد ہلاک ہوئے،یہ اعداد و شما حکومتی اعدادو شمار سے 70فیصد زائد ہیں۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق شمالی امریکی جزائر پر مبنی ملک پورٹو ریکو میں سمندری طوفان ماریاسے ایک امریکی یونیورسٹی کے مطالعے کے مطابق 4600افراد ہلاک ہوئے ہیں جوکہ حکومت کی جانب سے بتائی گئی تعداد کا ستر گناہے۔

محققین کے مطابق گزشتہ سال ستمبر میں آنے والے طوفان سے ایک تہائی ہلاکتیں طبی امور میں بجلی کی بندش اور تباہ حال سڑکوں کے خلل کے باعث ہوئیں۔ پورٹوریکو حکومت نے کہا کہ اسے توقع تھی کہ ہلاکتیں کہیں زیادہ ہیں جو کہ سرکاری طور پر رپورٹ ہوئی ہیں۔

(جاری ہے)

سرکاری طور پر بتایاگیاتھا کہ ہلاکتیں 64تھیں۔تاہم ماہرین نے کہا کہ ہلاکتوں کی واضح تعداد کاتعین طوفان کی بے پناہ تباہی کے باعث بہت پیچیدہ ہے۔

پورٹوریکو کے وفاقی امورکی انتظامیہ کے آفیسر نے ہارورڈ یونیورسٹی کے سروے کا خیرمقدم کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ طوفان ماریاکی شدت سے بڑے پیمانے پر تباہی ہوئی جس سے ہلاکتیں ہوئیں۔ حکومت کی جانب سے جارج واشنگٹن یونیورسٹی کو بھی ہلاکتوں کی تعداد جاننے کیلئے سروے کاکہا ہے اور یہ سروے بھی بہت جلد جاری کیاجائیگا۔انہوں نے کہا کہ دونوں سروں سے مستقبل میں آنے والے طوفانوں سے نمٹنے اور انسانی جانوں کے ضیاع کو روکنے کیلئے تیاریوں میں مدد ملے گی۔