قومی اسمبلی میں خواتین ارکان نے حکومت سے بحریہ یونیورسٹی میں طالبات کو جنسی طور پر ہراساں کر نے کے معاملے پر ایکشن لینے کا مطالبہ کر دیا

بدھ مئی 21:30

اسلام آباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 30 مئی2018ء) قومی اسمبلی میں خواتین ارکان نے حکومت سے بحریہ یونیورسٹی میں طالبات کو جنسی طور پر ہراساں کر نے کے معاملے پر ایکشن لینے کا مطالبہ کر دیا ۔

(جاری ہے)

بدھ کو قومی اسمبلی میں ایم کیو ایم پاکستان کی رکن ثمن سلطانہ جعفری نے کہا کہ بحریہ یونیورسٹی میں 80سے زائد طالبات کے ساتھ امتحان کے دوران غلط رویہ اختیار کیا گیا ہے ، مسلم لیگ (ن) کی رکن شزا فاطمہ خواجہ نے کہا کہ جنسی ہراسگی سے متعلق بحریہ یونیورسٹی کی طالبات نے ایک شکایت درج کرائی ہے ، اساتذہ کی ذمہ داری بنتی ہے کہ وہ طلباء کا تحفظ کریں ،اس معاملے پر ایکشن لیا جائے ،وہ شخص کئی اور یونیورسٹیوں میں بھی رہ چکا ہے