تلسی’’بیسل‘‘ جوڑوں میں سوزش ،امراض قلب اور ذیابیطس سے بچائو کے لئے مفید ہے، ماہرین

جمعرات مئی 13:00

لندن۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 31 مئی2018ء)برطانوی ماہرین صحت نے کہا ہے کہ تلسی ’’بیسل‘‘ کے پودے میں طب و صحت کے لیے بہترین اجزا موجود ہیں جو جان لیوا امراض سمیت جوڑوں میں سوزش، امراض قلب اور ذیابیطس سے بچائو کے لئے مفید ہے۔کوئین میری کالج لندن کے شعبہ صحت کے ماہرین کی تحقیق سے معلوم ہوا ہے کہ ہزاروں سال سے پاک و ہند میں استعمال ہونے والے تلسی ’’بیسل‘‘ کے پودے میں شفا اور صحت کے حیرت انگیز خزانے موجود ہیں۔

(جاری ہے)

تلسی میں وٹامن، معدنیات، کیلشیئم، وٹامن کے، کینسر سے لڑنے والے اینٹی اکسیڈنٹس اور سوزش سے بچانے والے بی ٹا کیریو فائلین اور دیگر قدرتی اجزا کوٹ کوٹ کر بھرے ہیں۔ ماہرین کے مطابق تلسی میں موجود اینٹی آکسیڈنٹس کا خزانہ دل کی حفاظت کرتا ہے۔تلسی کا پتہ کولیسٹرول اور بلڈ پریشر کو کم کرنے میں بہت مفید ثابت ہوسکتے ہیں۔ ماہرین نے کہا ہے کہ صرف 6 ہفتوں تک تلسی کے اجزا کھانے سے ذہنی تناؤ میں 40 فیصد تک کمی ہوتی ہے جس کے نتیجے میں جسمانی دفاعی نظام مضبوط ہوتا ہے۔تلسی میں جسمانی سوزش ،جسمانی درد، سوزش، سوجن اور جوڑوں کے درد کو کم کرنے کی حیرت انگیز صلاحیت پائی جاتی ہے۔ واضح رہے کہ تلسی خون میں شکرکی مقدار بھی برقرار رکھتی ہے۔