نامزدگی واپس لیکر میڈیا میں متنازع بنا دیا گیا ہے ‘

ناصر خان کھوسہ کی نگران وزیر اعلیٰ پنجاب کا عہدہ سنبھالنے سے معذرت میرے کیخلاف بے بنیاد پروپیگنڈا کیا گیا، اگر اس منصب کے لیے نام تجویز کرنے سے پہلے مشورہ کرلیا جاتا تو بہتر ہوتا‘ گفتگو

جمعرات مئی 13:14

لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 31 مئی2018ء) سابق بیوروکریٹ ناصر خان کھوسہ نے نگران وزیراعلی پنجاب کا عہدہ سنبھالنے سے معذرت کرلی۔اس حوالے سے نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ میری نامزدگی واپس لیکر میڈیا میں متنازع بنا دیا گیا ہے۔میرے کے خلاف بے بنیاد پروپیگنڈا کیا گیا، اگر اس منصب کے لیے نام تجویز کرنے سے پہلے مشورہ کرلیا جاتا تو بہتر ہوتا۔

انہوں نے کہا کہ حالیہ پیدا ہونے والے حالات کے تناظر میں نگراں وزیراعلی کاعہدہ نہیں سنبھال سکتا ۔ ناصر خان کھوسہ نے کہا کہ شفاف انتخابات کے لیے نگران وزیراعلی کو سیاسی جماعتوں کا اعتماد حاصل ہونا چاہیے۔واضح رہے کہ پنجاب اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر اور پی ٹی آئی رہنما میاں محمود الرشید اور وزیراعلی پنجاب شہباز شریف کے درمیان نگران وزیراعلی کے لیے سابق بیوروکریٹ ناصر خان کھوسہ کے نام پر اتفاق کیا گیا تھا جس کا باضابطہ اعلان بھی کیا گیا۔

(جاری ہے)

تاہم بعدازاں بنی گالہ میں عمران خان کی زیر صدارت پی ٹی آئی کے کور گروپ کے اجلاس میں پارٹی کے مرکزی قائدین نے ناصر کھوسہ کے نام پر شدید تحفظات کا اظہار کیا۔جس کے بعد پی ٹی آئی کی جانب سے پنجاب کے نگراں وزیراعلی کے لیے نامزد ناصر کھوسہ کا نام واپس لینے کا فیصلہ کیا گیا، جس کی تصدیق میاں محمود الرشید کی جانب سے بھی کی گئی، جن کا کہنا تھا کہ مشاورت کے بعد نیا نام دیا جائے گا۔