دنیا کے نصف سے زائد بچے محرومی کا شکارہیں، سیو دی چلڈرن

مسلح تنازعات، غربت اور خاص طور پر بچیوں کے ساتھ روا رکھا جانے والا ناروا سلوک اہم وجہ ہے،رپورٹ

جمعرات مئی 13:31

نیویارک(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 31 مئی2018ء) دنیا کے نصف سے زائد بچوں کو محرومی یا پسماندگی کا سامنا ہے۔۔جرمن ریڈیو کے مطابق بچوں کے تحفظ کی تنظیم سیو دی چلڈرن کی ایک تازہ رپورٹ میں بتایا گیا کہ اس صورتحال میں تقریبا 1.2ارب بچوں اور بچیوں کی زندگیاں دائو پر لگی ہیں۔

(جاری ہے)

اس تنظیم کے مطابق اس کی وجہ مسلح تنازعات، غربت اور خاص طور پر بچیوں کے ساتھ روا رکھا جانے والا ناروا سلوک ہے۔ کم عمری میں شادیاں، جبری مشقت اور ناقص خوراک نے بھی صورتحال کو خراب کرنے میں اہم کردار ادا کیا ہے۔ اس رپورٹ کے مطابق سب سے زیادہ متاثرہ بچے مغربی اور وسطی افریقی ممالک میں ہیں۔

متعلقہ عنوان :