انسانی حقوق کے سر گرم کارکن نعمت گل سپرد خاک

جمعرات مئی 14:53

ہری پور۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 31 مئی2018ء) انسانی حقوق کے سر گرم کارکن اور ہیومن ڈویلپمنٹ آرگنائزیشن (ایچ ڈی او) کے فیلڈ کوآرڈینیٹر نعمت گل کو نماز جنازہ کی ادائیگی کے بعد آبائی گائوں میں سپرد خاک کر دیا گیا، وہ گذشتہ روز مختصر علالت کے بعد ہسپتال میں انتقال کر گئے تھے، 35 سالہ نعمت گل نے پسماندگان میں ایک بیوہ چھوڑی ہے۔ خاندانی ذرائع کے مطابق نعمت گل تقریباً ایک ماہ سے ہرنیا کے درد کے عارضہ میں مبتلا تھے جس پر ڈسٹرکٹ ہیڈ کوارٹر ہسپتال ہری پور میں تقریباً دو ہفتہ قبل ان کا آپریشن ہوا تھا جس کے فوراً بعد بلڈ پریشر اور پٹھوں میں تنائو کی تکلیف شروع ہو گئی اور ہائی بلڈ پریشر کے باعث تقریباً آٹھ روز قبل وہ اچانک چکرا کر گر پڑے جس سے انہیں سر میں شدید چوٹ آئی اور قومہ میں چلے گئے۔

(جاری ہے)

انہیں ایبٹ آباد کے ایک پرائیویٹ ہسپتال میں داخل کروایا گیا جہاں کے انچارج ڈاکٹر نے ایڈمیشن کے تیسرے روز نعمت گل کے دماغ کا آپریشن کیا لیکن دماغ سے خون کا بہائو نہ رک سکا جو جان لیوا ثابت ہوا۔ نعمت گل کو محلہ روشن آباد کے قبرستان میں سینکڑوں اشکبار آنکھوں کے سامنے سپرد خاک کر دیا گیا۔ نماز جنازہ میں انسانی حقوق کے کارکنوں، وکلاء، سیاسی ورکروں، علماء، صحافیوں اور دیگر مکتبہ فکر سے تعلق رکھنے والے افراد کی کثیرتعداد نے شرکت کی۔

متعلقہ عنوان :