سپریم کورٹ نے چاروں صوبوں میں ایک ماہ کے دوران کی گئی بھرتیوں اور تبادلوں سے متعلق تفصیلی رپورٹ طلب کرلی

جمعرات مئی 18:22

سپریم کورٹ نے چاروں صوبوں میں ایک ماہ کے دوران کی گئی بھرتیوں اور تبادلوں ..
لاہور۔31 مئی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 31 مئی2018ء) سپریم کورٹ نے چاروں صوبوں میں گزشتہ ایک ماہ کے دوران کی گئی بھرتیوں اور تبادلوں سے متعلق تفصیلی رپورٹ طلب کرلی۔

(جاری ہے)

سپریم کورٹ نے قرار دیا کہ عدالت اعظمیٰ کے فیصلے کی روشنی میں ایسے تمام تبادلے اور تقرریاں بدنیتی پر مبنی ہیں، چاروں صوبوں میں ایک ماہ کے دوران کی گئی بھرتیوں اور تبادلوں سے متعلق تفصیلی رپورٹ طلب کرتے ہوئے عمل درآمد عدالتی فیصلے سے مشروط کر دیا۔

سپریم کورٹ رجسٹری میں الیکشن کمیشن کی جانب سے بھرتیوں اور تبادلوں پر پابندی کیس کی سماعت کے دوران چیف جسٹس آف پاکستان نے ریمارکس دیئے کہ یہاں ہر شخص دوسرے کو نواز رہا ہے۔ عدالت نے تمام صوبائی حکومتوں کو 1 ہفتے میں تقرر و تبادلوں کی تعداد اور تفصیلی رپورٹ پیش کرنے کا حکم دے دیا۔