مقبوضہ کشمیر ،بھارتی فوجیوں نے گزشتہ ما ہ مئی میں31کشمیریوں کو شہیدکیا، مقبوضہ کشمیرمیں(آج)ہڑتال کی جائیگی

جمعہ جون 18:30

سرینگر(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 01 جون2018ء) مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوجیوں نے اپنی ریاستی دہشت گردی کی جاری کارروائیوں کے دوران گزشتہ ماہ مئی میںایک خاتون اور 6 لڑکوں سمیت 31بے گناہ کشمیریوں کو شہید کیا۔کشمیر میڈیا سروس کے ریسرچ سیکشن کی طرف سے جمعہ کو جاری کئے گئے اعدادو شمار کے مطابق ان شہادتوں کی وجہ سے 3خواتین بیوہ اور5بچے یتیم ہوئے۔

اس عرصے کے دوران بھارتی فورسز نے پرامن مظاہرین کے خلاف گولیوں،پیلٹ گن اور آنسو گیس سمیت طاقت کا وحشیانہ استعمال کرکے 3سو 14افراد کو زخمی کر دیا جبکہ گھرو ں پر چھاپوں ،محاصروں اور پکڑ دھکڑکی کارروائیوں کے دوران حریت رہنمائوں اور کارکنوں سمیت 2سو 88شہریوں کو گرفتارکیاگیا۔ادھر مقبوضہ علاقے میں بھارتی فوجیوں کے ہاتھوں شہریوں کے قتل عام کے واقعات میں اضافے، مذہبی مقامات اورشہداء کی قبروںکی بے حرمتیوں ،شوپیاں کے علاقے سگن میں پھلوں کے باغات کاٹنے اور مختلف جیلوں میں کشمیری نظربندوںکی حالت زار کے خلاف (آج)مکمل ہڑتال کی جائیگی ۔

(جاری ہے)

ہڑتال کی کال سید علی گیلانی،، میرواعظ محمد عمر فاروق اور محمدیاسین ملک پر مشتمل مشترکہ حریت قیادت نے دی ہے ۔مقبوضہ علاقے میں کشمیری نظربندوں کی رہائی اور بھارتی فوجیوں کے مظالم کا سلسلہ بند کرانے کے مطالبے کے حق میں جمعہ کو مشترکہ حریت قیادت کے زیر اہتمام جامع مسجد نوہٹہ ، لال چوک ،حیدپورہ اور سرینگر کے دیگر علاقوںمیں پرامن احتجاجی مظاہرے کئے گئے ۔

حریت رہنماء محمد یوسف نقاش، بلال صدیقی ، شوکت احمد بخشی اور نور محمد کلوال کی قیادت میں مظاہرین نے آزادی کے حق میں اور بھارت کے خلاف فلک شگاف نعرے بلند کئے۔ بھارتی فوج کی ایک تیز رفتار گاڑی نے نوہٹہ میں مظاہرے میںشامل ایک نوجوان کو دانستہ طورپرٹکر مارکر شدید زخمی کر دیا۔محمد یاسین ملک نے سرینگر کے علاقے Bundکی بلال مسجد میں ایک اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے بھارتی فورسز کے اہلکاروںکی طرف سے قبرستانوں کی بے حرمتی، آزادی پسندوں کے اہلخانہ پر حملوں ،انکے گھروںاورپھلوں کے باغات کو نقصان پہنچانے اور انکے گھروں کو نذر آتش کرنے کی کوشش کی شدید مذمت کی ۔

انہوںنے کہاکہ اس طرح کے ظالمانہ ہتھکنڈوں سے کشمیری عوام کو اپنی جدوجہد آزادی جاری رکھنے سے روکا نہیں جاسکتا۔ حریت رہنمائوں جاویداحمد میر اورامتیاز احمد ریشی نے مختلف مقامات پر عوامی اجتماعات سے خطاب کرتے ہوئے اور ڈیموکریٹک فریڈم پارٹی ، مسلم لیگ ، ہائی کورٹ بار ایسوسی ایشن اور تحریک کشمیر نے اپنے بیانات میں مقبوضہ علاقے خاص طورپر جنوبی کشمیرمیں بھارتی مظالم کی شدید مذمت کی ہے ۔دریں اثناء ضلع اسلام آباد کے علاقے کھنہ بل میں بھارتی سینٹرل ریزروپولیس فورس کے ایک گاڑی پر نامعلوم مسلح افراد کی طرف سے دستی بم کے حملے میں تین فوجی اور ایک شہری زخمی ہو گیا ۔