یمنی فوج نے الحدیدہ کو باغیوں سے واگذار کرانے کے لئے تین محاذ کھول دیئے

یمنی فوج نے الحدیدہ کو باغیوں سے چھڑانے کے لیے تین محاذوں سے کارروائی کا منصوبہ تیار کیاہے،،گورنر کی گفتگو

ہفتہ جون 12:37

صنعائ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 02 جون2018ء) یمن کی سرکاری فوج نے ایران کی حمایت یافتہ حوثی باغیوں کے زیرتسلط ساحلی شہر الحدیدہ کو آزاد کرانے لیے تین محاذوں سے کارروائی کے لیے پلان تیار کیا ہے۔عرب ٹی وی کے مطابق الحدیدہ کے گورنر الحسن الطاھرنے ایک اخباری بیان میں بتایا کہ سرکاری فوج نے الحدیدہ کو باغیوں کے قبضے سے آزاد کرانے کے لیے تین اطراف سے کارروائی کا منصوبہ تیار کیا ہے۔

(جاری ہے)

ان کا کہنا تھا کہ یمن کی فوج الحدیدہ میں جنوب کی سمت سے داخل ہو گی جب کہ جنوب مشرقی سمت سے شہر کے تمام داخلی اور خارجی راستوں کو سیل کیا جائے گا۔ جنوب مشرق میں باجل تک کے علاقے کی ناکہ بندی کی جائے گی تاکہ باغیوں کو کمک نہ مل سکے۔حسن الطاھر کے مطابق شمال کی طرف سے ایک راستہ باغیوں کے فرار کے لیے چھوڑا گیا ہے جب کہ شہر کے ہوائی اڈے سے بھی ایک نیا محاذ کھولا جائے گا۔۔یمن کے انٹیلی جنس ادارے الحدیدہ میں جنگجوؤں کی تعداد اور ان کی قوت کا اندازہ لگانے کی کوشش کر رہے ہیں۔ گورنر کے مطابق الحدیدہ کا ہوائی اڈہ پہلا اہم مقام ہے جسے سرکاری فوج استعمال کرے گی۔