ام المومنین سیدہ عائشہ صدیقہ ؓ کا یوم وفات ہفتہ کے روز انتہائی عقیدت و احترام سے منایاگیا

ہفتہ جون 14:02

فیصل آباد۔2 جون(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 02 جون2018ء)عالم اسلام سمیت ملک بھر میںام المومنین سیدہ عائشہ صدیقہ ؓ کا یوم وفات ہفتہ کو نہایت عقیدت و احترام سے منایا گیا۔ نبی کریم ؐ کو آپ سے بے حد محبت تھی۔ آپ بہت بڑی فقیہہ اور سینکڑوں احادیث کی بھی حافظہ تھیں ۔حضرت عائشہ ؓ کے کاشانہ نبوت میں حرم نبویؐ کی حیثیت سے داخل ہونے کے بعد قرآن مجید کا ایک بڑا حصہ نازل ہوا ۔

آپ ؓ کو کم و بیش 10سال تک فخر موجودات، سرورکائنات ، سرکار دوعالم ، نبی آخر الزماںحضرت محمد مصطفی ؐ کے ساتھ رہنے کا شرف حاصل ہوا۔ آپ ؓ اخلاق حسنہ میں بھی سب سے ممتاز تھیں اور آپ ؓ نے بڑی تعداد میں غلاموں کو آزاد کروایا ۔ آپ ؓ کی شان میں قرآن پاک کی 17قرآنی آیات بھی ناز ل ہوئیں۔ ام المومنین حضرت سیدہ عائشہ صدیقہ ؓ کے یوم وفات کے موقع پر ملک بھر کے تمام شہروں میں سیمینارز، کانفرنسز اور خصوصی تعزیتی تقریبات کا بھی اہتمام کیا گیا جس میں علمائے کرام ، مشائخ عظام ، مذہبی دانشور اور دیگرا ہم دینی شخصیات نے آپ ؓ کی سیرت و کردار اور حیات طیبہ سمیت اسلام کیلئے خدمات پر تفصیلی روشنی ڈالی ۔

(جاری ہے)

اس موقع پر الیکٹرانک میڈیا نے خصوصی پروگرامات نشر جبکہ پرنٹ میڈیا نے بھی خاص مضامین کی اشاعتوں کا اہتمام کیا ۔ آپ ؓ نے 17رمضان المبارک 58ھ کو 67سال کی عمر میں وصال فرمایا ۔ اس موقع پر آپ ؓ کی وصیت کے مطابق آپ ؓ کی نماز جنازہ معروف صحابی حضرت ابو ہریرہ ؓ نے پڑھائی اور آپ ؓ کو جنت البقیع میں سپرد خاک کر دیا گیا ۔ آپ ؓ کے یوم وفات پر ملک بھر کی مساجد میں قرآن خوانی جبکہ تعلیمی اداروں میں محافل میلاد کا بھی انعقاد کیاگیا۔