سرفراز کا ٹاس جیت کر بیٹنگ کرنا درست فیصلہ تھا ،ْرمیز راجہ

سرفراز نے جب بیٹنگ کا فیصلہ کیا تو اس وقت دھوپ نکلی ہوئی تھی اور پچ پر گھاس نہیں تھی ،ْانٹرویو

ہفتہ جون 14:24

لیڈز (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 02 جون2018ء) پاکستان کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان رمیز راجا نے کہا ہے کہ ہیڈنگلے لیڈز پر قومی ٹیم کے کپتان سرفراز احمد کا ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ درست تھا۔ایک انٹرویومیں پاکستان کے لیے 57 ٹیسٹ میچوں میں 31.83 کی اوسط سے 2833 رنز بنانے والے رمیز راجا نے کہا کہ مجھے خوشی ہے کہ سرفراز احمد کی قیادت میں نوجوان کھلاڑیوں کے ساتھ قومی ٹیم میں کچھ کرنے اور خود کو منوانے کا جذبہ نظر آرہا ہے۔

سابق کپتان نے کہاکہ لارڈز کی فتح کے بعد لیڈز میں کھلاڑیوں کے حوصلے بلند دکھائی دے رہے ہیں جو ایک حقیقت پسندانہ سوچ کے مترادف ہے۔انہوںنے کہاکہ سرفراز کا پہلے بیٹنگ کرنا ایک دلیرانہ فیصلہ تھا جسے سراہنا چاہیے۔رمیز راجا کے مطابق پاکستان ٹیم کے کپتان نے جب بیٹنگ کا فیصلہ کیا اس وقت دھوپ نکلی ہوئی تھی اور پچ پر گھاس نہیں تھی۔

(جاری ہے)

انہوں نے کہا کہ عین ممکن تھا کہ انگلش کپتان جو روٹ بھی ٹاس جیتے تو وہ بھی یہی کرتے جو سرفراز نے کیا۔

قومی ٹیم کے سابق کپتان نے کہا کہ یہ درست ہے کہ انگلینڈ کی ٹیم لارڈز ٹیسٹ کھیل کر شدید دباؤ محسوس کر رہی ہے اور قومی ٹیم کے پاس سیریز جیتنے کا یہ ایک بہترین موقع ہے۔رمیز راجا نے لیڈز ٹیسٹ کی پہلی اننگز میں صفر پر آئوٹ ہونے والے امام الحق کے حوالے سے کہا کہ تھوڑا صبر امام کا اتنی جلدی تجزیہ کرنا غیر مناسب ہو گا، وہ ایک نوجوان بیٹسمین ہے، جو کچھ کرنا چاہتا ہے۔انہوںنے کہاکہ امام انگلینڈ میں پہلی سیریز کھیل رہا ہے اسے تھوڑا وقت دینا مناسب ہو گا، انگلینڈ میں آکر تو بڑے بڑے تجربے کار بیٹس مین مشکلات ہو شکار ہو جایا کرتے ہیں۔

متعلقہ عنوان :