یہودی بستیوں کی توسیع،فرانس کی شدید الفاظ میں مذمت

ہفتہ جون 16:36

پیرس(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 02 جون2018ء) فرانس کی حکومت نے فلسطین کے علاقے غرب اردن میں یہودی بستیوں میں مزید توسیع اور یہودی آباد کاروں کو بسانے کیلئے سیکڑوں نئے گھروں کی تعمیر کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔

(جاری ہے)

گزشتہ روز ترجمان فرانسیسی وزارت خارجہ کی جانب سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا کہ اسرائیل کی جانب سے مقبوضہ فلسطینی علاقوں میں یہودی بستیوں کی مسلسل توسیع اور نئی تعمیرات خود مختار فلسطینی ریاست کے قیام کی کوششوں میں بہت بڑی رکاوٹ بن رہی ہے،فرانسیسی صدر نے 22 دسمبر 2017ء کو فلسطین میں یہودیاباد کاری پر مستقل پابندی عائد کرنے کا مطالبہ کیا تھا،جس پر فرانس اب بھی اپنے اس مطالبے پر قائم ہے۔