پارلیمنٹ کےقانون کوسنگل بنچ کیسےمسترد کرسکتا ہے،نوازشریف

انتخابی اصلاحات کمیٹی نےکاغذات نامزدگی میں متفقہ ترامیم کیں،یہ آئین اورقانون کو نہ ماننےوالی بات ہے،الیکشن میں تاخیرہوئی توعلاقائی آوازیں بھی اٹھیں گی،جبکہ ریاست پاکستان کو نقصان پہنچے گا۔قائد مسلم لیگ (ن) نوازشریف

sanaullah nagra ثنااللہ ناگرہ ہفتہ جون 18:32

پارلیمنٹ کےقانون کوسنگل بنچ کیسےمسترد کرسکتا ہے،نوازشریف
لاہور(اُردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین۔02 جون 2018ء) : پاکستان مسلم لیگ ن کے قائد محمد نوازشریف نے کہا ہے کہ پارلیمنٹ کےقانون کوسنگل بنچ کیسےمسترد کرسکتا ہے،انتخابی اصلاحات کمیٹی نےکاغذات نامزدگی میں متفقہ ترامیم کیں،یہ آئین اورقانون کو نہ ماننےوالی بات ہے،،الیکشن میں تاخیرہوئی توعلاقائی آوازیں بھی اٹھیں گی،جبکہ ریاست پاکستان کو نقصان پہنچے گا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق آج مسلم لیگ ن کے پارلیمانی بورڈ کا اجلاس ہوا۔ اجلاس کی صدارت مسلم لیگ ن کے صدر محمد شہبازشریف نے کی۔ اجلاس میں قائد ن لیگ نوازشریف ،پارٹی کے سینئر رہنماؤں رجا ظفر الحق ، مریم اورنگزیب،، ثناء اللہ زہری، رانا ثناءاللہ،، مشاہد حسین،، عابد شیرعلی، برجیس طاہر،ملک پرویز،،امیر مقام،، راجااشفاق سرور، سائرہ تارڑ،،مریم نواز،، خواجہ سعد رفیق،، احسن اقبال،، رانا تنویرسمیت دیگر نے شرکت کی۔

(جاری ہے)

اجلاس میں مسلم لیگ ن کے قائد محمد نواز شریف نے کہا کہ پارٹی امیدواروں کا فیصلہ میرٹ اور پارٹی سے وفاداری پر کیا جائے گا۔پارٹی ٹکٹ صرف پارٹی وفاداروں کوہی دیے جائیں گے۔انہوں نے کہا کہ انتخابات وقت پرہونا جمہوریت کا حسن ہے۔۔انتخابات میں ایک منٹ کی تاخیر بھی برداشت نہیں ہے۔۔نوازشریف نے کہا کہ الیکشن کسی صورت ملتوی نہیں ہونے دیں گے۔

الیکشن بروقت نہ ہونے سے علاقائی آوازیں بھی اٹھیں گی۔ اس صورتحال میں الیکشن کیسے بروقت ہوں گے۔ الیکشن بروقت نہ ہونے سے ریاست پاکستان کو نقصان پہنچے گا۔ انہوں نے کہا کہ انتخابی اصلاحات کمیٹی نےکاغذات نامزدگی میں متفقہ ترامیم کیں۔ پارلیمنٹ کے قانون کوسنگل بنچ کیسے مسترد کر سکتا ہے۔ یہ آئین اور قانون کو نہ ماننے والی بات ہے۔ الیکشن مؤخر کرانے کے حربے اختیار کیے جا رہے ہیں۔

اس موقع پراجلاس سے خطاب کرتے ہوئے ن لیگ کے صدر شہبازشریف نے کہا کہ مسلم لیگ ن کو کوئی سازش نہیں توڑ سکی۔ جولوگ پارٹی چھوڑ گئے ان کا حساب ووٹرز کریں گے۔ انہوں نے واضح کیا کہ الیکشن میں مسلم لیگ ن کا بیانیہ اور نعرہ” ووٹ کوعزت دو“ ہوگا۔ اجلاس میں پارٹی عہدیداروں سے متعلق اہم فیصلے بھی کیے گئے۔پارٹی صدر شہبازشریف نے اجلاس میں سابق وفاقی وزیراطلاعات ونشریات مریم اورنگزیب کو پارٹی ترجمان مقرر کردیا ہے۔

اس سے قبل سینیٹر آصف کرمانی بطور ترجمان مسلم لیگ ن اپنی ذمہ داری ادا کررہے تھے۔واضح رہے مسلم لیگ ن نے الیکشن 2018ء کی تیاریاں مکمل کرلی ہیں۔ ن لیگ نے الیکشن میں امیدواروں کو ٹکٹس دینے سے متعلق کمیٹیاں اور پارٹی منشور کو حتمی شکل دینا بھی شروع کردی ہے۔ پارٹی ٹکٹس سے متعلق امیدواروں کی جانچ پڑتال کیلئے سینئر رہنماؤں کو کمیٹیوں میں شامل کیا گیا ہے ۔

کمیٹیوں سے امیدواروں کو گزار کر پارٹی قائدنوازشریف اور ن لیگ کے صدرشہبازشریف امیداروں کے انٹرویوز کریں گے۔ جس کے بعدحتمی انتخابی امیدوارو ں کو پارٹی ٹکٹس جاری کیے جائیں گے۔ذرائع ن لیگ کا کہنا ہے کہ مسلم لیگ ن نے آئندہ الیکشن کیلئے زبردست منشور تیار کرلیا ہے۔منشور کو حتمی شکل دی جارہی ہے۔ جس کے بعد پارٹی منشور کو پبلک کردیا جائے گا۔منشور میں عوامی امنگوں ترجمانی اور خوشحال پاکستان کیلئے لائحہ عمل مرتب کیا گیا ہے۔