یمن، حوثی باغیوں سے جھڑپ میں فورسز کا بھاری جانی و مالی نقصان،19جوان جاں بحق، متعدد زخمی

ہفتہ جون 20:17

صنعائ(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 02 جون2018ء) یمن میں حوثی باغیوں سے جھڑپ کے دوران حکومتی فورسز کو بھاری جانی و مالی نقصان اٹھانا پڑا،دو بدو جھڑپ میں سیکورٹی فورسز کے 19جوان جاں بحق اور بھاری تعداد میں زخمی ہو گئے،۔غیر ملکی میڈیا کے مطابق یمنی وزیر اعظم احمد بن داعر نے گزشتہ روز اعلان کیا تھا کہ ہم ملک کے اہم ساحلی شہروں میں سے الا حدیدہ کو حوثیوں سے نجات دلانے کے قریب ہیں۔

(جاری ہے)

یمن کے ضلع الا حدیدہ میں ملکی انتظامیہ کے حامی اور حوثیوں کے درمیان جھڑپ میں 19 فوجی ہلاک ہو گئے۔عدن شہر کے شعبہ صحت سے منسلک ذرائع سے حاصل کردہ معلومات کے مطابق حوثیوں سے جھڑپ میں اپنی جانوں سے ہاتھ دھو بیٹھنے والے 19 فوجیوں کی نعشوں سمیت بھاری تعداد میں زخمیوں کو شیخ عثمان تحصیل میں واقع ایک جرمن اسپتال کو منتقل کیا گیا ہے۔خیال رہے کہ وزیر اعظم احمد بن داعر نے گزشتہ روز اعلان کیا تھا کہ ہم ملک کے اہم ساحلی شہروں میں سے الا حدیدہ کو حوثیوں سے نجات دلانے کے قریب ہیں، اس شہر کی بازیابی کے بعد دارالحکومت صنا۔ طائز، ماہیت اور علاقوں میں آپریشنز کیے جائینگے۔