خیبرپختونخوا کے فنکار برادری نے حکومت کے خلاف پشاورہائی کورٹ میں رٹ دائر کردی

ہفتہ جون 22:13

پشاور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 02 جون2018ء) خیبرپختونخوا کے فنکار برادری نے حکومت کے خلاف پشاورہائی کورٹ میں رٹ دائر کردی گئی، رٹ میںصوبائی حکومت ،کلچر ڈیپارٹمنٹ سیکرٹری خزانہ اور کمیٹی ممبران کو فریق بنایا گیا ہے۔

(جاری ہے)

پشاور میں صوبائی حکومت کی جانب سے نظر انداز کرنے پر مقامی فنکاروں نے عدالت سے رجوع کرلیا فنکاروں کی جانب سے پشاور ہائی کورٹ میں درخواست جمع کرائی گئی ہے جس میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ صوبائی حکومت نے ثقافت کے زندہ آمین کے نام سے فنکاروں کیلئے ماہانہ 30 ہزار وظیفہ کا اعلان کیا تھا۔

جبکہ مقامی فنکاروں کو نظر انداز کرکے غیر متعلقہ افراد کو نوازا گیا۔ درخواست میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ ماہانہ وظیفہ جن افراد کو دیا گیا ان کا ریکارڈ سامنے لایا جائے۔ درخواست میں بتایا گیا ہے کہ حکومت نے فنکاروں کی بہتری کیلئے جو رقم خرچ کی ہے ان کا ریکارڈ بھی سامنے لایا جائے۔ درخواست میں صوبائی حکومت کلچر ڈیپارٹمنٹ سیکرٹری خزانہ اور کمیٹی ممبران کو فریق بنایا گیا ہے۔ درخواست حکومت کی جانب سے نظر انداز کیے گئے مقامی فنکاروں نے دائر کی ہے۔