پانچ سال مراعات لینے والوں نے جا تے جاتے اپنے لئے مزید مراعات لے کر عوام کے امنگوں پر پانی پھیر دیا،نوابزادہ میر سراج رئیسانی

سرکاری ہسپتالوں میں عوام کے لئے سہولیات نہ ہونے کے برابر ہے ،بلوچستان کے عوام کو مزید پسماندگی کی طرف دھکیل دیا ہے ،چیئر مین بلوچستان متحدہ محاذ

ہفتہ جون 22:51

کوئٹہ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 02 جون2018ء) بلوچستان متحدہ محاذ کے چیئرمین وپاکستان پرست رہنماء نوابزادہ میر سراج رئیسانی نے کہا ہے کہ بلوچستان اسمبلی میں سابقہ اراکین اسمبلی کو تا حیات مراعات اور میڈیکل سہولیات دینے کی مذمت کر تے ہوئے کہا ہے کہ پانچ سال مراعات لینے والوں نے جا تے جاتے اپنے لئے مزید مراعات لے کر عوام کے امنگوں پر پانی پھیر دیا بلوچستان متحدہ محاذ اس عمل کو غیر جمہوری عمل سمجھتی ہے سرکاری ہسپتالوں میں عوام کے لئے سہولیات نہ ہونے کے برابر ہے لیکن عوام کا دعویدار بن کر جس طرح مراعات لئے ہیں ہم سمجھتے ہیں کہ بلوچستان کے عوام کو مزید پسماندگی کی طرف دھکیل دیا ان خیالات کا اظہار انہوں نے ساراوان ہائو س میں مختلف وفود سے بات چیت کر تے ہوئے کیا انہوں نے کہا ہے کہ ان ممبران نے پانچ سال کے دوران صوبے کے مفاد میں کتنے قانون سازی کی اور کتنے بل پیش کئے ہیں اور جا تے جا تے تا حیات کے لئے مراعات لے کر عوام کے امنگوں پر پانی پھیر دیا جس کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے ماہانہ ڈھائی لاکھ روپے کے علاوہ میڈیکل سہولیات اپنے اور خاندان کے لئے جو حاصل کئے ہیں کیا صوبے کے غریب عوام کو یہ حق نہیں ہو نا چا ہئے اگر یہ واقعی عوام کے خیر خواہ اور ہمدرد ہو تے تو تمام سرکاری ہسپتالوں کے حالت زار بہتر بنا تے اور وہاں سہولیات دیتے تو سب کا علاج بہتر انداز میں ہو تے انہوں نے کہا ہے کہ اپنے مراعات کے لئے تو یکجا ہو جا تے ہیں اسمبلی میں ہمیشہ نفرتیں پیدا کرنے کی کوشش کی اور برادر اقوام کو لڑانے کی کوشش کی گئی ہے اور عوام کو دست وگریبان کرنے کی کوشش کی گئی ہے اسمبلی کے باہر جو قومی پرچم ہے وہ پرانے حالت میں ہے اور دوسرا جھنڈا نہیں لگایا گیا ان پر ان کانظر نہیں ہے اپنے مراعات سے دلچسپی تھی انہوں نے کہا کہ اگر یہ مراعات ہی اپنے کی بجائے غریب عوام کے لئے دیتے تو آج ہم کتنے خوش نصیب ہو تے مگر افسوس کہ ایسا نہیں کیا گیا عام انتخابات سرپر ہے صوبے کے غریب عوام کو سوچنا چا ہئے کیا وہ ایسے نمائندوں کو منتخب کرینگے جو عوام کے حقوق کی بجائے اپنے حقوق میں دلچسپی لیتے ہیں بلوچستان اسمبلی میں سابقہ اراکین اسمبلی کو تا حیات مراعات اور میڈیکل سہولیات دینے کی مذمت کر تے ہوئے کہا ہے کہ پانچ سال مراعات لینے والوں نے جا تے جاتے اپنے لئے مزید مراعات لے کر عوام کے امنگوں پر پانی پھیر دیا بلوچستان متحدہ محاذ اس عمل کو غیر جمہوری عمل سمجھتی ہے سرکاری ہسپتالوں میں عوام کے لئے سہولیات نہ ہونے کے برابر ہے لیکن عوام کا دعویدار بن کر جس طرح مراعات لئے ہیں ہم سمجھتے ہیں کہ بلوچستان کے عوام کو مزید پسماندگی کی طرف دھکیل دیا۔