تھر کے علاقے چھاچھرو کے قریبی گائوں میں آتشزدگی کے باعث 60 جھونپڑیاں راکھ بن گئیں ،ْ 30بکریاں بھی ہلاک

اتوار جون 13:30

تھر (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 03 جون2018ء) تھر کے علاقے چھاچھرو کے قریبی گائوں میں آتشزدگی کے باعث 60 جھونپڑیاں راکھ بن گئیں۔میڈیا رپورٹ کے مطابق آگ لگنے کی وجوہات کے حوالے سے تاحال واضح نہیں ہوسکا تاہم اچانک بھڑک اٹھنے والی آگ نے چند لمحوں میں پورے گائوں کو لپیٹ میں لیا جبکہ رہائشیوں نے بمشکل اپنی جان بچائی اور اپنی مویشیوں کو بچانے کی کوشش کی تاہم اطلاعات کے مطابق بھاری نقصان ہوا۔

چھاچھرو ٹائون کمیٹی کے صدر قمر دین رحیمو نے دعویٰ کیا کہ شارٹ سرکٹ کے باعث آگ لگی اور پورا گاوں لپیٹ میں آگیا۔مقامی افراد کے مطابق وہ شدید گرمی کے موسم میں گھروں سے باہر رہنے پر مجبور ہیں کیونکہ ان کے گھر جل کر راکھ بن چکے ہیں۔متاثرہ افراد نے کہا کہ اس آتشزدگی کے باعث اناج اور دیگر قیمتی اشیا سمیت ان کا بھاری نقصان ہوا ہے۔

(جاری ہے)

مقامی افراد کے مطابق اس آتشزدگی کے دوران کم ازکم 30 بکریاں بھی ہلاک ہوئیں۔

انھوں نے حکام پر فوری طور پر مدد کے لیے نہ پہنچنے کا الزام عائد کرتے ہوئے کہا کہ آگ بھڑکتے ہی انتظامیہ کو اطلاع دی گئی تھی تاہم انھوں نے فائر فائٹرز کی کوئی ٹیم جائے وقوع پر نہیں بھیجی ،ْمتاثرین نے ان کے نقصانات کے ازالے کا مطالبہ بھی کیا۔یاد رہے کہ اسلام کوٹ سے 30 کلومیٹر کے فاصلے پر واقع گائوں ویکریو میں گزشتہ برس بھی اسی طرح کی آتشزدگی سے 500 کے قریب گھر تباہ ہوگئے تھے اور 200 سے زائد جانور بھی ہلاک ہوگئے تھے۔

متعلقہ عنوان :