پشاور ،ْمعمولی جھگڑے پر لڑکی کو سرِ بازار برہنہ کر دیا

پولیس نے دو ملزمان کو گرفتار کرلیا ،ْ مرکزی ملز م فرار ہونے میں کامیاب ملزم کو ایسی سزا دی جائے کہ آئندہ کوئی اس طرح کی حرکت نہ کر سکے ،ْوالد کامطالبہ

اتوار جون 13:30

پشاور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 03 جون2018ء) خیبر پختونخوا کے دارالحکومت پشاور میں معمولی گھریلو جھگڑے کے نتیجے میں ایک نوجوان لڑکی کو نیم برہنہ کر دیا۔میڈیا رپورٹ کے مطابق یہ واقعہ پشاور کے پرہجوم علاقے ہشت نگری میں ہفتہ کی رات پیش آیا۔۔پولیس نے واقعے میں ملوث دو افراد کو گرفتار کر لیا تاہم مرکزی ملزم فرار ہونے میں کامیاب ہو گیا ،ْپولیس کے مطابق اس واقعہ سے دو روز پہلے متاثرہ لڑکی کے رشتہ داروں کے درمیان جھگڑا بھی ہوا تھا۔

(جاری ہے)

پولیس انسپکٹر واجد نے بتایا کہ جھگڑے کے بعد فریقین تھانے آئے اور ان کی شکایت بھی درج کر لی گئی۔۔پولیس انسپکٹر نے بتایا کہ رکشہ ڈرائیور کی بیٹی اپنی والدہ کے ساتھ ماموں کے گھر سے جا رہی تھی کہ راستے میں ملزم مظہر حسین نے لڑکی کی چادر کھینچ لی۔لڑکی نے صحافیوں کو بتایا کہ اس پر تشدد بھی کیا گیا۔لڑکی کے والد محی الدین کا کہنا تھا ملزم کو ایسی سزا دی جائے کہ آئندہ کوئی اس طرح کی حرکت نہ کر سکے۔متاثرہ خاندان کے پڑوسیوں کا کہنا تھا کہ یہ انتہائی غیر انسانی فعل تھا۔

متعلقہ عنوان :