نوازشریف کی بھارتی فوج کی جانب سے رمضان کے مقدس مہینے میں کشمیریوں پر ڈھائے جانے والے مظالم کی شدید مذمت

بھارتی مظالم کشمیریوں کا جذبہ حریت دبا نہیں سکتے ،ْالحاق پاکستان کشمیریوں کے خون میں ہے ،ْپاکستان اور کشمیرکو دنیا کی کوئی طاقت مٹا نہیں سکتی ،ْ سابق وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر خان کا نوازشریف کو ٹیلیفون ،ْ ایکٹ 74میں ترمیم پر اہم ترین کردار ادا کرنے پر شکریہ ادا کیا

اتوار جون 16:10

مظفرآباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 03 جون2018ء) پاکستان مسلم لیگ (ن)کے قائد سابق وزیر اعظم محمد نوازشریف نے بھارتی فوج کی جانب سے رمضان کے مقدس مہینے میں کشمیریوں پر ڈھائے جانے والے مظالم کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ بھارتی مظالم کشمیریوں کا جذبہ حریت دبا نہیں سکتے الحاق پاکستان کشمیریوں کے خون میں ہے اورپاکستان اور کشمیرکو دنیا کی کوئی طاقت مٹا نہیں سکتی ۔

اتوار کو آزاد جموں وکشمیر کے وزیر اعظم راجہ محمد فاروق حیدر خان نے سابق وزیر اعظم پاکستان اور مسلم لیگ ن کے قائد محمد نواز شریف کو ٹیلی فون کیا اور آزاد کشمیر کے عوام کی جانب سے ایکٹ 74میں ترمیم پر اہم ترین کردار ادا کرنے پر ان کا شکریہ ادا کیا۔ وزیر اعظم نے قائد مسلم لیگ ن سے کہا کہ آزاد کشمیر کی تعمیر وترقی میں خصوصی دلچسپی لینے پر آپ کے اہم کردار پر ہر کشمیری آپ کاممنون ہے ۔

(جاری ہے)

اس موقع پر قائد مسلم لیگ ن محمد نواز شریف نے کہا کہ کشمیریوں سے محبت ہر پاکستانی کے دل میں ہے ۔ انہوں نے بھارتی فوج کی جانب سے رمضان کے مقدس مہینے میں کشمیریوں پر ڈھائے جانے والے مظالم کی شدید مذمت کی اور بھارتی فوج کی جانب سے نوجوانوں کواپنی گاڑیوں تلے کچلنے کے واقعہ کی بھی شدید ترین الفاظ میں مذمت کی ۔ انہوں نے کہا کہ بھارتی مظالم کشمیریوں کا جذبہ حریت دبا نہیں سکتے الحاق پاکستان کشمیریوں کے خون میں ہے اورپاکستان اور کشمیرکو دنیا کی کوئی طاقت مٹا نہیں سکتی ۔ انہوں نے راجہ فاروق حیدر کو حقیقی معنوں میں مسلم لیگ ن کے منشور کے مطابق عوام کی خدمت کرنے پر مبارکباد دی ۔