ْ حیدرآباد، اہل علم کے مطابق فارم نامزدگی میں کرپشن کا راستہ بند ہونا چاہئے،عبدالقیوم شیخ

امیدواروں کے انٹرویو ہر حلقے میں اسی طرح کرے جس طرح ملازمین کی تقرری کیلئے ادارے انٹرویو لیتے ہیں، ہر قومی و صوبائی اسمبلی کارکن تنخواہ دار ملازم ہے،سابق رُکن سندھ اسمبلی

اتوار جون 20:20

حیدرآباد(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 03 جون2018ء) سابق رُکن سندھ اسمبلی عبدالقیوم شیخ نے اپنے بیان میں کہا ہے کہ اہل علم کے مطابق فارم نامزدگی میں کرپشن کا راستہ بند ہونا چاہئے، انہوں نے کہاکہ امیدواروں کے انٹرویو ہر حلقے میں اسی طرح کرے جس طرح ملازمین کی تقرری کیلئے ادارے انٹرویو لیتے ہیں، ہر قومی و صوبائی اسمبلی کارکن تنخواہ دار ملازم ہے، عوام سے بذریعہ ٹیکس رقم وصول کرکے تنخواہ دی جاتی ہے، یہ سیاسی جماعتوں کے سربراہوں کے وفادار ہونے کے بجائے ووٹروں کے وفادار بننے چاہئیں ، کیا سیاسی جماعتیں تجارتی ادارہ ہیں، انہوں نے کہاکہ نگراں حکومت فوری طورپر فراہمی آب کا انتظام کرتے ہوئے سمندری پانی میٹھا بنانے کیلئے تالاب ضلعی سطح پر بنانے کے انتظامات کرے، ڈیم صوبوں میں بنوائے الیکشن سے زیادہ اہم مسئلہ پانی بجلی اور روزگار جیسے 60 فیصد عوام پانی فراہم کرنے والے واٹر ٹینکر مافیا پر مکمل پابندی لگاکر سزا کا اعلان کرتے ہوئے واٹر بورڈ کراچی کا خاتمہ کرکے نئی پائپ لائن ڈالے، انکم سپورٹ پروگرام کی رقم ایک کھرب سے زیادہ ہے جو ہر سال لٹادی جاتی ہے کون مستفید ہوتے ہیں نگراں وزیراعلیٰ کے علم مین ہوگا، انہوں نے کہاکہ اب ان درختوں کو نہیں کاٹا گیا جو انسانی زندگی کیلئے خطرناک ہیں، ان کو کواٹ کر پھل دینے والے کروڑؤں درخت لگوائے جائیں۔