حب چوکی کے قریب رینجرز کے جوانوں پر حملے کی شدید مذمت کرتے ہیں،شیعہ علماء کو نسل پاکستان صوبہ سندھ

اتوار جون 20:20

کراچی(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 03 جون2018ء) شیعہ علماء کو نسل پاکستان صوبہ سندھ کے جنرل سیکر ٹری علامہ ریاض حسین الحسینی کا صوبائی دفتر سے جاری بیان میں کہنا ہے کہ گز شتہ شب حب چوکی کے قریب رینجرز کے جوانوں پر حملے کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہیںدہشت گردوں کی ان بزدلانہ کاروائیوں سے ہماری فورسز کے حوصلے ہر گز کم نہیں ہو سکتے علامہ ریاض حسین الحسینی کا مذید کہنا تھا ابھی تک شیعہ علماء کو نسل کراچی ڈویزن کے جنرل سیکرٹری محمد یعقوب شہباز کی سیکیورٹی کو واپس نہیں کیا ہے جو انتہائی افسوس ناک عمل ہے اس وقت ملک بھر میں فعال مذ ہبی شخصیات ہٹ لسٹ پر ہیںملت تشیع کے چیدہ چیدہ افراد کو دہشت گردی کا نشانہ بنایا جارہا ہے ایسے کڑے اور نازک وقت میں سندھ انتظامیہ کا یہ غیر ذمہ دارانہ اقدام سمجھ سے بالاتر ہے ملت تشیع کہ اس محب وطن کی زندگی کے لئے خطرات پیدا کئے جارہے ہیںیعقوب شہبازکراچی ڈویزن کے جنرل سیکرٹری ہونے کی وجہ سے کراچی بھر کے دوروں پر ہوتے ہیں جہاں پرکئی بار سیکورٹی کے مسائل پیش آئے ہیں جس پر ہم نے اعلی افسران سے رابطہ کیا لیکن ابھی تک کوئی خاص نوٹس نہیں لیا گیا ہم نگراں وزیر اعلی سندھ فضل الرحمان اور آئی جی سندھ اے ڈی خواجہ سے مطالبہ کرتے ہیں کہ وہ21رمضان شہادت یوم علی علیہ اسلام سے پہلے پہلے یعقوب شہباز صاحب کوسیکورٹی فراہم کریں بصورت دیگر کسی بھی نا خشگوار واقعے کی تمام ترذمہ داری حکومت پر عا ئد ہوگی۔

#