بیٹ مار کر ڈریسنگ روم کا شیشہ توڑنے کی خبر من گھڑت ہے، فواد عالم

ڈریسنگ روم پہنچ کر میں نے بیٹ کھڑکی کے ساتھ رکھے اپنے بیگ پر پھینکا جو غلطی سے کھڑکی پر جا لگا،ایسا میں نے دانستہ نہیں کیا،معاملے کو غیر ضروری طور پر بڑھا چڑھا کر پیش کیا جا رہا ہے،بلے باز

اتوار جون 21:00

بیٹ مار کر ڈریسنگ روم کا شیشہ توڑنے کی خبر من گھڑت ہے، فواد عالم
لندن(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 03 جون2018ء) پاکستانی ٹیسٹ کرکٹر فواد عالم نے کہا ہے کہ بیٹ مار کر ڈریسنگ روم کا شیشہ توڑنے کی خبر من گھڑت ہے۔32 سالہ فواد عالم ان دنوں انگلینڈ میں لنکاشائر لیگ کھیل رہے ہیں جہاں انہوں نے گزشتہ روز کولون گراونڈ پر ہوم ٹیم کے خلاف کلیتھرو کیلئے ٹی 20میچ کھیلا۔اوپننگ بیٹس مین کے آوٹ ہونے کے بعد نمبر تین پر فواد عالم جب بیٹنگ کرنے کے لئے وکٹ پر پہنچے تو امپائر نے انہیں یہ کہہ کر بیٹنگ سے روک دیا کہ آپ تاخیر سے بیٹنگ کے لئے آئے ہیں۔

امپائر نے انہیں کہا کہ آپ کو 60سیکنڈز کے اندر یہاں پہنچنا تھا،آپ کو دیر ہوگئی لہذا ٹائم آئوٹ ہوگیا ہے۔فواد عالم نے امپائر سے استفسار کیا،تو انہوں نے کہا جا ئو اور کرکٹ اصولوں کی کتاب پڑھو۔فواد عالم کو امپائر کے فیصلے کے آگے سر تسلیم خم کرتے ہوئے پویلین لوٹنا پڑا جہاں سے یہ خبر جنگل میں آگ کی طرح پھیل گئی کہ انہوں نے اس واقع کے بعد بیٹ مار کر ڈریسنگ روم کا شیشہ توڑ دیا۔

(جاری ہے)

جب فواد عالم کا موقف جاننے کے لئے ان سے رابطہ کیا گیا تو ان کا کہنا تھا کہ قواعد کے مطابق آئوٹ ہونے والے بیٹس مین کی جگہ دوسرے بیٹس مین کے گراونڈ جانے کا وقت کچھ دو منٹ ہے تاہم مذکورہ میچ میں امپائر نے مجھے اس مقررہ وقت سے پہلے ہی ٹائم آوٹ کہہ کر گراونڈ چھوڑنے کا کہا جو میرے لیے حیران کن تھا۔فواد عالم نے کہا کہ امپائر کے فیصلے پر مجھے ہتھیار ڈالنا ہی تھے جو میں نے کیا البتہ غصہ تو تھا، جب آپ کے ساتھ کچھ ایسا ویسا ہو،بس میرے معاملے میں بھی ایسا ہی تھا، اس عالم میں ڈریسنگ روم پہنچ کر میں نے بیٹ کھڑکی کے ساتھ رکھے اپنے بیگ جو مجھ سے ذرا فاصلے پر تھا، پھینکا جو غلطی سے کھڑکی پر جا لگا،ایسا میں نے دانستہ نہیں کیا البتہ افسوس کیساتھ کہنا پڑتا ہے کہ اسے غیر ضروری طور پر بڑھا چڑھا کر پیش کیا جا رہا ہے۔

یاد رہے پاکستان کے لئے تین ٹیسٹ 38 ون ڈے اور 24 ٹی ٹوئینٹی کھیلنے والے فواد عالم کو دورہ آئر لینڈ اور انگلینڈ پر نہ منتخب کرنے پر سلیکشن کمیٹی کو شدید کا سامنا کرنا پڑا تھا۔فواد عالم نے مزید کہا کہ ڈسپلن کے حوالے سے کبھی مجھ پر انگلی نہیں اٹھی ،لنکا شائر لیگ میں یہ افسوس ناک واقعہ میرے لیے تکلیف کا سبب ہے۔

متعلقہ عنوان :