ووٹ کوعزت دوکا مطلب ”گوعمران گو“ ہے، نوازشریف

عوام دھاندلی کیخلاف ڈٹ جائیں،25 جولائی کو قوم کا امتحان ہے،حیرت ہےشاہد خاقان نے2 دن پہلےچابیاں دیں تو زیرولوڈشیڈنگ تھی،آج غیراعلانیہ لوڈشیڈنگ جاری ہے۔اسلام آباد میں ورکرزکنونشن سے خطاب

sanaullah nagra ثنااللہ ناگرہ پیر جون 19:46

ووٹ کوعزت دوکا مطلب ”گوعمران گو“ ہے، نوازشریف
اسلام آباد(اُردوپوائنٹ اخبارتازہ ترین۔04 جون 2018ء) : مسلم لیگ ن کے قائد محمد نواز شریف نے کہا ہے کہ ووٹ کوعزت دوکا مطلب”گوعمران گو “ہے، عوام دھاندلی کیخلاف ڈٹ جائیں،25 جولائی کو قوم کا امتحان ہے، حیرت ہے شاہد خاقان نے چابیاں دیں تو زیرولوڈشیڈنگ تھی، آج غیراعلانیہ لوڈشیڈنگ جاری ہے۔انہوں نے آج اسلام آباد میں ورکرز کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہم پاکستان کیلئے لڑرہے ہیں۔

ہمارے مخالفین کا کوئی ایجنڈا نہیں ہے۔انہوں نے کہا کہ دھاندلی کا سلسلہ شروع ہوگیا ہے۔عوام کسی صورت انتخابات میں دھاندلی نہ ہونے دیں گے۔ عوام دھاندلی کیخلاف ڈٹ جائیں۔ انہوں نے کہا کہ مجھے پوری زندگی کیلئے نااہل کردیا گیا۔ مجھے بیٹے سے تنخواہ نہ لینے پر نکال دیا گیا۔ میں نے کونسی کرپشن کی تھی،کیا میں قومی خزانے میں کوئی خردبرد کی تھی۔

(جاری ہے)

مجھے ایک اقامے کی بنیاد پروزیراعظم سے نکال دیا گیا۔ کیایہ فیصلہ رہنا چاہیے یا واپس ہونا چاہیے؟ آپ میرے خلاف فیصلے کو واپس کرسکتے ہو۔ 25 جولائی کو قوم کا امتحان آرہا ہے۔2مہینے بعد عوام کی حکمرانی ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ یہ سب جھوٹے لوگ ہیں ان کی باتوں میں نہ آنا۔ انہوں نے کہا کہ عوام ووٹ کوعزت دوکا مطلب سمجھیں۔ ووٹ کوعزت دوکا مطلب ہے گوعمران گو ہے۔

انہوں نے کہا کہ لاڈلے نے ہمیں کام نہیں کرنے دیا۔ اگر کام کرنے دیا جاتا تو100زیادہ کام کرتے۔۔عمران خان بتائیں انہوں نے خیبرپختونخواہ میں کیا کام کیا ہے؟سابق وزیراعظم نوازشریف نے کہا کہ کمال ہے کہ شاہد خاقان عباسی 2دن پہلے چابیاں دے کرآئے ہیں ،ملک میں زیرلوڈشیڈنگ تھی۔ حیرت ہے آج غیراعلانیہ لوڈشیڈنگ جاری ہے۔ہم نے سسٹم میں 10ہزار میگاواٹ بجلی شامل کی۔

شہباز شریف نے جوکام کیے ان کی مثال نہیں ملتی۔اس سے قبل ن لیگ کی رہنماء مریم نواز نے کارکنان سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مسلم لیگ ن کے شیر میدان میں ہیں، مخالفین کہاں ہیں۔ مخالفین نے تمام منفی ہتھکنڈے استعمال کرکے دیکھ لیے۔ دھونس اور دھمکی کو قبول نہیں کریں گے۔ ناکامی کےبعد الیکشن سے فرار کے راستے ڈھونڈےجارہے ہیں۔ انہوں نے خبردار کیا کہ دھاندلی ہوئی تو نوازشریف لاہور سے اسلام آباد بھی جا سکتا ہے۔ مخالفین کو الیکشن سے بھاگنے نہیں دینگے۔ انہوں نے کہاکہ عوام کی طاقت سےناانصافی پر مبنی فیصلہ تبدیل کرائیں گے۔