عوام فیصلہ کو روزگار تعلیم وصحت کی سہولیات پہنچانیوالے نمائندے چاہیے فرقہ واریت پھیلانے والے لٹیرے چاہیے ،ڈاکٹر محمدا براہیم

پیر جون 22:53

کوئٹہ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 04 جون2018ء) جماعت اسلامی کے صوبائی نائب امیرڈاکٹر محمدا براہیم نے کہا کہ الیکشن 2018 میں قوم کو فیصلہ کرنا ہوگا کہ روزگار تعلیم وصحت کی سہولیات بہم پہنچانیوالے نمائندے چاہیے یا لسانیت ،فرقہ واریت کاپرچار کرنیوالے لٹیرے چاہیے جوعوام کو مسائل کے دلدل سے نکالنے کیلئے مزید مسائل پیدا کریں قوم کو سنجیدہ اور باکردار کا انتخاب کرنا چاہیے جو انہیں موجودہ اخلاقی معاشی اور سیاسی بحران سے نکالنے کی اہلیت رکھتی ہو،آئندہ انتخابات ملک کے روشن و خوشحال مستقبل کے لیے بہت سے امکانات لارہے ہیں،ان امکانات سے فائد ہ اٹھانے کے لیے عوام کو پورے ہو ش وحواس سے اپنا ووٹ سوچ سمجھ کردین دار دیانت دارباصلاحیت نمائندوں کے حق میں استعمال کرنا ہوگا۔

انہوں نے اپنے بیان میں کہا کہ عوام کو اب برادری ازم ،علاقیت او ر لسانیت کے تعصبات سے نکل کر نظریے اور کردار کو ووٹ دینا ہوگا۔

(جاری ہے)

ایم ایم اے نے لوگوں کو مسلکی اختلافات سے نکال کر ایک قوم بنا دیا ہے،اب اس قوم کو متحد ہو کر اس پاکستان کے خواب کو شرمند ہ تعبیر کرنا ہے جو نظریاتی اسلامی ہے جس کیلئے ہمارے آبائواجداد نے بہت قربانیاں دیکر حاصل کیا ،ہماری آئندہ نسلوں کا مستقبل اسلامی پاکستان خوشحال بلوچستان سے وابستہ ہے اور ہمیں اپنی آنے والی نسلوں کو سدھارنے کے لیے انہیں نظریاتی بنیادوں پر مضبوط کرنا ہوگا۔

الیکشن کمیشن کو بھی آئندہ انتخابات کو صاف شفاف اور غیر جانبدار بنانے اورکرپٹ اور بدیانت لوگو ں کے ہاتھوں ہائی جیک ہونے سے بچانے کے لیے کڑا انتظام کرنا ہوگااور پارلیمانی کمیٹی کی سفارشات پرمکمل عمل درآمدکویقینی بنانا ہوگا۔ کچھ لوگ دولت کے بل بوتے پرپورے انتخابی عمل کو یرغمال بناتے اور پولنگ اسٹیشن اور عملے کو خرید لیتے ہیں الیکشن کمیشن کو ایسے مافیاز کاپوری جرات سے راستہ روکنا ہوگا تاکہ عوام کو صاف ستھری اور باکردار قیادت کے انتخاب کا موقع مل سکے۔