رمضان المبارک کے آخری عشرے کی عبادت اعتکاف ہے‘ اس میں بندہ دنیا سے کٹ کر صرف اللہ تعالیٰ کی طرف رجوع کرتا ہے اور اپنے گناہوں کی معافی مانگتا ہے

جمعیت علما ء مشائخ آل جموں و کشمیر کے مرکزی صدر صاحبزادہ پیر محمد شمیم نعمانی کی صحافیوں سے بات چیت

منگل جون 16:00

میرپور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 05 جون2018ء) جمعیت علما ء مشائخ آل جموں و کشمیر کے مرکزی صدر صاحبزادہ پیر محمد شمیم نعمانی نے کہا کہ رمضان المبارک کے آخری عشرے کی عبادت اعتکاف ہے۔ اس میں بندہ دنیا سے کٹ کر صرف اللہ تعالیٰ کی طرف رجوع کرتا ہے۔اور اپنے گناہوں کی معافی مانگتا ہے۔اعتکاف میں عبادت کرنے سے اللہ تعالیٰ کا قرب حاصل ہوتا ہے۔

روح کی تربیت اور نفسانی خواہشوں کو ترک کر کے تقویٰ اختیار کرنے کے لیے رمضان المبارک کے روزے تمام امت پر فرض کیے گئے ہیں۔ کھانے پینے کی پابندی کے علاوہ فضول باتوں سے بھی پرہیز کرنا چاہیے۔خوش نصیب لوگوں کو رمضان المبارک کا مہینہ نصیب ہوتا ہے ہمیں اس ماہ میں زیادہ سے زیادہ عبادات کرنی چاہیے اور غریبوں کا خصوصی خیال رکھنا چاہیے۔

(جاری ہے)

۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔

صاحبزادہ پیر محمد شمیم نعمانی نے کہا کہ رمضان المبارک رحمتوں و برکتوں والا مہینہ ہے۔دین اسلام محبت ، اخوت کا درس دیتا ہے ۔ بر صغیر میں اسلام اولیاء کرام کی کاوشوں سے پھیلا دین اسلام کی تعلیمات پر عمل کر کے ہم دنیا و آخر ت میں کامیابی حاصل کر سکتے ہیں ۔انہوں نے کہااولیاء کرام نے حضور نبی اکرم ؐ کی تعلیمات پر عمل کیا اور پوری دُنیا میں یہی پیغام پہنچایا۔