الخدمت نے جرمانے ادا کرکے جیلوں سے 28قیدیوں کو رہائی دلا دی

الخدمت جیلوں میں قیدیوں کی فلاح وبہبود کیلئے مستقل کام کر رہی ہے ،رہائی پانے والے اپنے آپ کو معاشرہ کا مفید رکن بنا ئیں :حافظ نعیم الرحمن

منگل جون 16:49

کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 05 جون2018ء) الخدمت نے کراچی کی 2جیلوں سے 28 قیدیوںکورہائی دلا دی ۔ رہا ئی سینٹرل جیل اور ملیر جیل سے دلائی گئی ،جہاں یہ قیدی اپنی سزامکمل کرچکے تھے مگر جرمانے کی رقم نہ ہونے کی وجہ سے مزیدسزا بھگت رہے تھے ۔الخدمت نے گزشتہ روز ان کے جرمانوں کی رقوم ادا کر کے انہیں رہا ئی دلا دی ۔رہائی کے موقع پرقیدی خوش تھے ۔

انہوں نے الخدمت کا شکریہ اداکیااوراس کی خدمات کو سراہا۔رہا ئی پانے والے قیدی اب اپنے اہل خانہ کے ساتھ عید کی خوشیاں منا سکیں گے۔رہائی کے موقع پر قائم مقام چیف ایگزیکٹو الخدمت راشد قریشی موجو د تھے ۔جرمانے کی رقم کی ا دائیگی کا عمل الخدمت کے منیجر(کوارڈینیشن )منظرعالم کی نگرانی میں مکمل کیا گیا ۔دریں اثنا قیدیوں نے رہائی کے بعد امیرجماعت اسلامی وصدرالخدمت کراچی حافظ نعیم الرحمن سے الخدمت ہیڈ آفس میں ملاقات کی اور رہائی پر ان کا اور الخدمت کا شکریہ ادا کیا ۔

(جاری ہے)

اس موقع پر راشد قریشی ودیگر ذمہ داران بھی موجود تھے۔قیدیوں سے گفتگو میں حافظ نعیم الرحمن نے انہیں رہائی پر مبارک دی اورکہا کہ جن جرائم کا ارتکاب آپ سے ہوا ہے اس کی سزا آپ پا چکے ہیں اوررہا ئی کہ بعد آپ الحمدللہ آزاد ہیں مگر ضروری ہے کہ آپ اللہ رب العزت سے اپنے گنا ہوں کی صدق دل سے معافی مانگیں اوراپنی زندگیوں کا رخ دین اسلام کی طرف موڑ لیں تاکہ آپ دنیا اورآخرت کی بھلائیاں حاصل کرسکیں اور معاشرے میں بہترین فرد کے طور پراپنا کردار کرسکیں ۔

حافظ نعیم الرحمن نے کہا کہ الخدمت جیلوں میں قیدیوں کی فلاح وبہبود کیلئے مستقل کام کر رہی ہے ۔ جرمانے ادا کر کے قیدیوں کو رہائی دلا ناان میں سے ایک ہے ۔انہوں نے کہا کہ بے شمارایسے قیدی اب بھی ملک کی جیلوں میں موجود ہیں جو جرمانوں کی معمولی رقم اد اکرنے کی بھی سکت نہیں رکھتے اوروہ عدم ادائیگی کی وجہ سے سزا بھگت رہے ہیں۔اس موقع پر قیدیوں نے اس عزم کا اظہار کیا کہ وہ نئی زندگی کی شروعات کریں گے اورمعاشرے کا کارآمد شہری بنیں گے۔

متعلقہ عنوان :