پاک فوج کے سربراہ جنرل قمر جاوید باجوہ کی زیر صدارت نیشنل یونیورسٹی آف ٹیکنالوجی بورڈ آف گورنرز کا اجلاس ،آئی ایس پی آر

نوجوانوں میں اعلٰی تکنیکی مہارت کو فروغ دینے کے لیے پہلی ٹیکنالوجی یورنیورسٹی کے قیام کا خواب پورا ہوگیا،جنرل قمر جاوید باجوہ

منگل جون 19:35

پاک فوج کے سربراہ جنرل قمر جاوید باجوہ کی زیر صدارت نیشنل یونیورسٹی ..
راولپنڈی ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 05 جون2018ء) پاک فوج کے سربراہ جنرل قمر جاوید باجوہ کی زیر صدارت نیشنل یونیورسٹی آف ٹیکنالوجی بورڈ آف گورنرز کا اجلاس منعقد ہوا ،پہلی یونیورسٹی آف ٹیکنالوجی 18 ستمبر سے کام شروع کرے گی، یونیورسٹی کے پروگرامز سے نوجوان اور انڈسٹری مستفید ہونگے۔

(جاری ہے)

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ((آئی ایس پی آر ) کے مطابق آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ کی زیرصدارت نیشنل یونیورسٹی آف ٹیکنالوجی بورڈ آف گورنرز کا اجلاس ہوا، جس میں پہلی ٹیکنالوجی یونیورسٹی کے قیام پر انتظامیہ کی تعریف کی گئی۔

نیشنل یورنیورسٹی آف ٹیکنالوجی ملک میں اعلٰی تعلیم یافتہ انجینیئرز اور مختلف شعبوں کے لیے ماہر ورک فورس تیار کرے گی۔۔جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا کہ نوجوانوں میں اعلٰی تکنیکی مہارت کو فروغ دینے کے لیے پہلی ٹیکنالوجی یورنیورسٹی کے قیام کا خواب پورا ہوگیا، پہلی ٹیکنالوجی یونیورسٹی کو پایہ تکمیل تک پہنچانے کے لیے انتظامیہ کی کاوشیں قابل تحسین ہیں۔آرمی چیف کی یونیورسٹی انتظامیہ کو میرٹ اور اعلٰی تعلیمی معیار برقرار رکھنے کی ہدایت دی ہے ۔