ملک بھر میں آئندہ عام انتخابات 2018ء میں حصہ لینے کے خواہش مند امیدواروں کی جانب سے کاغذات نامزدگی کے حصول اور جمع کرانے کا سلسلہ جاری

منگل جون 18:30

اسلام آباد ۔ (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 05 جون2018ء) ملک بھر میں آئندہ عام انتخابات 2018ء میں حصہ لینے کے خواہش مند امیدواروں کی جانب سے کاغذات نامزدگی کے حصول اور جمع کرانے کا سلسلہ جاری ہے۔ منگل کو الیکشن کمیشن کی جانب سے ترمیم شدہ جاری شیڈول کے تحت دوسرے روز بھی ریٹرننگ آفیسران سے مختلف امیدواروں اور ان کے نمائندوں کی جانب سے کاغذات نامزدگی کے حصول کا سلسلہ جاری رہا جبکہ بعض حلقوں میںامیدواروں کی جانب سے کاغذات نامزدگی جمع کرانے کاسلسلہ شروع ہو چکا ہے ۔

پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری کے لئے این اے 100 چنیوٹ سے بھی کاغذات نامزدگی حاصل کئے گئے ہیں۔ خیبر پختونخوا سے 275 سے زائد قومی اور صوبائی اسمبلیوں کے امیدواروں نے کاغذات نامزدگی حاصل کئے ہیں ۔

(جاری ہے)

سابق چیف جسٹس جسٹس افتخار محمد چوہدری کے لئے لاہور کے حلقہ این اے 131سے کاغذات نامزدگی حاصل کئے گئے ہیں ۔اسلام آباد سے مسلم لیگ (ن) کے رہنما انجم عقیل خان نے این اے 53 سے کاغذات نامزدگی حاصل کئے ہیں۔

مختلف علاقوں سے ریٹرننگ آفیسران سے خواجہ سرائوں کی جانب سے بھی کاغذات نامزدگی حاصل کئے گئے ہیں۔ کاغذات نامزدگی جمع کرانے کی آخری تاریخ 8 جون مقرر کی گئی ہے جس کے بعد 14 جون تک ان کی جانچ پڑتال کی جائے گی ۔ ریٹرننگ آفیسران کی جانب سے کاغذات نامزدگی منظور یا مسترد کئے جانے کے فیصلوں کے خلاف اپیلیں 19 جون تک دائر ہوں گی۔ ایپلٹ ٹربیونل کی جانب سے یہ اپیلیں 26 جون تک نمٹائیں جائیں گی جس کے بعد امیدواروں کی نظر ثانی فہرست 27جون کو جاری کی جائے گی۔ کاغذات نامزدگی 28جون کوواپس لئے جائیں گے جبکہ امیدواروں کو انتخابی نشان 29جون کو الاٹ کئے جائیں گے ۔ پولنگ 25جولائی کو ہوں گے۔