عید الفطر پر بھارتی فلموں پر لگی پابندی کا دورانیہ کم کرنے پر پاکستانی فنکاروں کا شدید احتجاج

فلم انڈسٹری کے فروغ ، فلمسازوں کی حوصلہ افزائی کیلئے فی الفور بھارتی فلموں کی نمائش پر دو ہفتوں کی پابندی کو برقرار رکھا جائے ثناء ،مائرہ خان ،ریشم ،عائشہ عمر ،مہوش حیات ،عروہ حسین ،احسن خان ،ہمایوں سعید ،شہریار منور ،جاوید شیخ ،فہد مصطفی، یاسر نوازسمیت دیگر کا ردعمل

بدھ جون 13:19

عید الفطر پر بھارتی فلموں پر لگی پابندی کا دورانیہ کم کرنے پر پاکستانی ..
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 06 جون2018ء) شوبز سے تعلق رکھنے والے فنکاروں نے بالی ووڈ فلموں کی پابندی پر ایک ہفتے کمی کرنے پر شدید احتجاج کیا ہے ۔

(جاری ہے)

اس حوالے سے اداکارہ ثناء ،مائرہ خان ،ریشم ،عائشہ عمر ،مہوش حیات ،عروہ حسین ،احسن خان ،ہمایوں سعید ،شہریار منور ،جاوید شیخ ،فہد مصطفی، یاسر نواز ،فضاء مرزا اور دیگر نے شدید ردعمل کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ پاکستانی فلمسازوں نے اپنی عید الفطر پر ریلیز ہونیوالی فلموں کے لئے کثیر سرمایہ کاری کر رکھی ہے اور حکومت کی جانب سے بھارتی فلموں کو عید الفطر پر دو ہفتوں کی پابندی عائد کی گئی تھی مگر اب بعض قوتوں نے اس فیصلے پر اثر انداز ہو کر پابندی کو ایک ہفتے تک کروا دیا ہے ۔

اس فیصلے کو فوری طور پر واپس لیا جائے تاکہ عید الفطر پر پاکستانی فلموں کی نمائش اور انکی کامیابی سے فلمسازوں کو حوصلہ مل سکے اور فلم انڈسٹری کو بھی فروغ مل سکے ۔انہوں نے کہا کہ ارباب اختیار سے مطالبہ ہے کہ فی الفور عید الفطر پر بھارتی فلموں کی نمائش پر دو ہفتوں کی پابندی کو برقرار رکھا جائے ۔

متعلقہ عنوان :