نگران وزیراعظم جسٹس (ر) ناصر الملک کیخلاف لاہور ہائیکورٹ میں درخواست دائر کر دی گئی

جسٹس مامون رشید نے رجسٹرار آفس کا اعتراض ختم کر دیا ، درخواست سماعت کیلئے پیش کرنے کی ہدایت

بدھ جون 14:44

نگران وزیراعظم جسٹس (ر) ناصر الملک کیخلاف لاہور ہائیکورٹ میں درخواست ..
لاہور (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 06 جون2018ء) لاہور ہائیکورٹ میں نگران وزیراعظم جسٹس (ر) ناصر الملک کے خلاف درخواست دائر کردی گئی۔مقامی وکیل جاوید اقبال جعفری نے نگران وزیراعظم ناصر الملک کے خلاف دائر درخواست میں موقف اختیار کیا ہے کہ نگران وزیراعظم نے عہدہ سنبھالنے کے فوری بعد اپنے آبائی علاقے سوات کا دورہ کیا جس پر سرکاری خزانے سے بے پناہ اخراجات کیے گئے۔

(جاری ہے)

دورہ سوات میں نگران وزیراعظم کو پروٹوکول دیا گیا، ان کی سکیورٹی اور آمدورفت پر جو اخراجات آئے وہ سرکاری خزانے سے لیے گئے لہٰذا یہ نگران حکومت کا مینڈیٹ نہیں۔درخواست میں استدعا کی گئی کہ نگران وزیراعظم کو حکم دیا جائے کہ وہ اپنے نجی دورہ سوات میں آنے والے اخراجات کو قومی خزانے میں جمع کرائیں۔۔لاہور ہائیکورٹ کے رجسٹرار آفس نے پہلے اس درخواست پر اعتراض لگایا تھا کہ یہ درخواست ہاتھ سے تحریر شدہ ہے اسے کمپیوٹرائز نہیں کیا گیا تاہم درخواست گزار نے اس پر اعتراض دور کیے بغیر دوبارہ درخواست جمع کرادی جس پر لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس مامون رشید درخواست پر سماعت کی اور اعتراض دور کرتے ہوئے اسے سماعت کے لیے پیش کرنے کی ہدایت کی۔